آفاق احمد کا بیان جھوٹ کا پلندہ ہے، قانونی چارجوئی کریں گے، مفتی نعیم

 Mufti Naeemکراچی، جامعہ بنوریہ عالمیہ کے مہتمم شیخ الحدیث مفتی محمدنعیم نے مہاجرقومی موومنٹ کے چئیرمین آفاق احمدکے الزامات کی سخت مزمت کی ہے اور کہاکہ علی انٹرپرائزکے مالکان کو جانتا ہوں اور نہ ہی کبھی رابطہ ہوا،میراکسی بھی سیاسی ومذہبی جماعت سے کوئی جھگڑا نہیں،تمام کوعزت کی نگاہ سے دیکھتاہوں اور مسائل کے سلسلے میںاکثرتنظیمیں رابطہ کرتی ہیں جنکی شریعت کی روشنی میں رہنمائی کرتاہوں۔ آفاق احمد فی الفوراپنے الزامات کی تردید کرتے ہوئے معافی مانگے بصورت دیگران کےخلاف قانونی چارہ جورئی کی جائیگی ۔گزشتہ روزسعودی عرب سے جامعہ بنووریہ عالمیہ کے ایڈمنسٹریٹر مولانا غلام رسول سے ٹیلیفونک گفتگوکرتے ہوئے انہوںنے آفاق احمدکے الزامات پرشدیدردعمل اور افسوس کااظہارکرتے ہوئے کہاکہ میراکسی بھی سیاسی ومذہبی جماعت یاتنظیم سے کوئی تعلق ہے اورنہ کسی سے جھگڑا۔تما م کوعزت کی نگاہ سے دیکھتاہوںاورحکومت سمیت اگرکوئی بھی سیاسی یامذہبی جماعت خلاف شریعت بیان دیتی ہے یاکام کرتی ہے توان پرتنقیداوراس حوالے سے شرعی نقطہ نظربیان کیاجاتاہے ،ملک کی اکثرسیاسی جماعتیںمسائل کے شرعی حل کے حوالے سے رابطہ کرتی ہے توشریعت کی روشنی میں ان کی رہنمائی کرتاہوں۔انہوںنے کہاکہ بھتہ خوری ،اغوابرائے تاوان جیسے جرائم اوردیگروارداتوںکوگناہ کبیرہ اور حرام سمجھتاہوں،اورایساکرنے والوں کی حوصلہ شکنی کرتاہوں۔علی انٹرپرائزکے مالکان کوجانتاہوںنہ ہی کبھی ان سے رابطہ رہا،فیکٹری مالکان حکومتی تحویل میں ہیں ان سے میرے بارے میں تصدیق جاسکتی ہے ۔انہوںنے مزیدکہاکہ علی انٹرپرائزسے بھتہ مانگے جانے کی اطلاع بھی میڈیاکے توسط سے آنے والی جی آئی ٹی رپورٹ سے ہوئی، آفاق کا بیان جھوٹ کاپلندہ اور چھپاعنادنظرآتاہے ،نامعلوم آفاق احمد کن جھوٹے چشم دیدگواہوںکی بنیادپرسنگین الزامات لگارہے ہیں۔مفتی محمدنعیم نے کہاکہ آفاق احمدکی جانب سے متحدہ قومی موومنٹ کے مرکزنائن زیروکے چکرلگانے کاالزام بھی بھونڈاہے کیونکہ 60سالہ عمرمیں دو،تین مرتبہ نائن زیروگیاوہ بھی اپنے کسی ذات مفادکےلئے نہیں بلکہ ملک وملت کی خاطرعلماکرام کی بڑی جماعت کے ہمراہ ۔انہوںنے کہاکہ آفاق احمدکے عنادکی وجہ وہ خودہی بہتر جانتے ہیںمیں انکی بھی عزت کرتارہاہوں لیکن انہیں اپنے الزامات کی تردیدجلدکرناہوگی بصورت دیگران کےخلاف قانون چارہ جوئی کاحق محفوظ رکھتاہوں۔ مکہ مکرمہ کی مسجدالحرام میں بیٹھے مجھے اس من گھڑت کہانی کی اطلاع ملی جومیرے لئے انتہائی تکلیف دہ ہے۔یہاںبیٹھ کران کےلئے اللہ تعالیٰ سے ہدایت اورحق گوئی کی دعاہی مانگی جاسکتی ہے۔

Top