وفاق سندھ سےسوتیلی ماں کا سلوک کررہاہے،وزیراعلیٰ

murad ali shahکراچی وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے وفاق پر سندھ کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کرنے کا الزام لگاتے ہوئے بتایا کہ وفاق نے سندھ کے حصے کے دو سوتین بلین روپے روک لئے ہیں۔نجی چینل کے مطابق کراچی میں پوسٹ بجٹ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کہا کہ گزشتہ آٹھ سال سے پوسٹ بجٹ پریس کانفرنس کر رہا ہوں، حالیہ بجٹ کے دو حصے ہیں۔ ایک سپلیمنٹری حصہ ہے جس میں زیادہ اخراجات کی منظوری ہوتی ہے، دوسرے حصے میں پورے سال کا بجٹ ہے لیکن تصدیق تین ماہ کی لیں گے۔اسمبلی 28 مئی کو تحلیل ہوجائے گی، پھر نگران سسٹم آئے گا۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ بجٹ تصدیق تیس ستمبر تک کی ہے، نئی اسمبلی بعد میں پھر تصدیق کرے گی،تعلیم کے بجٹ میں گزشتہ سال کی نسبت اضافہ کیا ہے، ملازمین کی بنیادی تنخواہوں میں 10 فیصد کا اضافہ کیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ وفاق سے کراچی کی تعمیر نو کے لیے بات کی مگر کچھ حاصل نہ ہوا۔ دس بلین سے کراچی میں سڑکیں، فلائی اوور، انڈر پاسز بنائیں گے۔ گورنر سندھ نے سات بلین روپے کی اسکیم کا افتتاح کرنے کی بات کی، مگر رواں سال وفاق نے پی ایس ڈی پی میں ایک ٹکا نہیں رکھا۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ انڈس ہائی وے روڈ پر حادثات سے اموات میں اضافہ ہو رہا ہے۔ وفاقی حکومت منصوبے کی رقم ہونے کے باوجود کچھ نہیں کر رہی۔ منصوبے کا ٹھیکہ بھی دے چکے ہیں لیکن حاصل کچھ نہیں ہوا۔انہوں نے مزید کہا کہ سندھ کو صرف 300 ملین روپے کی تین اسکیموں سے نوازا گیا۔ آبی شعبے میں سندھ کو 1.7 فیصد شیئر دیا گیا۔ ’کیا یہ ہمارے ساتھ انصاف ہو رہا ہے‘؟مراد علی شاہ نے کہا کہ سندھ میں پیپلز پارٹی 2013 کے بعد اور مضبوط ہوئی ہے۔ پنجاب میں روزانہ کی بنیاد پر لوگ (ن) لیگ چھوڑ کر جا رہے ہیں۔ پیپلز پارٹی سندھ میں کامیابی سے پورا پاکستان جیتے گی۔

Top