Wednesday, October 28, 2020
Home Trending عدالتوں کے حکم امتناعی ہمارے کاموں میں رکاوٹ بن رہے ہیں، شرجیل...

عدالتوں کے حکم امتناعی ہمارے کاموں میں رکاوٹ بن رہے ہیں، شرجیل میمن

sharjeel-memon320x180کراچی، وزیر اطلاعات و بلدیات سندھ شرجیل انعام میمن نے کہا ہے کہ غیر قانونی شادی ہالز اور دیگر تجاوزات کے خلاف جاری آپریشن نہ تو کسی کے دباؤ یا فرمائش پر کیا جارہا ہے اور نہ ہی اس پر کسی کا کوئی دباؤ قبول کیا جائے گا۔ چیف جسٹس آف پاکستان سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ ماتحت عدالتوں کی جانب سے دئیے جانے والے حکم امتناعی پر شوکاز نوٹس لیں کیونکہ اس طرح کے حکم امتناعی ہمارے کاموں میں رکاوٹ بن رہے ہیں۔ قبضہ مافیا، چائنا کٹنگ اور گھوسٹ ملازمین کے خلاف ہماری مہم جاری رہے گی اور جب تک اس صوبے کو ان سے پاک نہیں کرلیتے خاموش نہیں بیٹھیں گے۔ کراچی کو روشنیو ں کا شہر بنانے کا عزم کرکے اس مہم کا آغاز کیا ہے اور اس شہر کے عوام کو روشنیوں کا شہر واپس دلوا ئیں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے منگل کے روز ڈسٹرکٹ ویسٹ میں اورنگی ٹاؤن میں اسکولوں کی آڑ میں قائم تین شادی ہالز کو مسمار کرنے کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ایڈمنسٹریٹر کراچی ثاقب سومرو، میٹروپولیٹن کمشنر کراچی مسعود عالم، ایڈمنسٹریٹر ویسٹ سجاد میمن، میونسپل کمشنر ویسٹ اشفاق ملاح اور دیگر بھی ان کے ہمراہ موجود تھے۔ شرجیل انعام میمن نے کہا کہ یہ کارروائی ہم کسی کے احکامات یا کسی کی ڈکٹیشن پر نہیں بلکہ خود اپنے طور پر ادارے سے کرپشن کے خاتمہ اور عوامی مفاد کے لئے دئیے گئے رفاہی و فلاہی پلاٹس پر ناجائز قبضے کے خلاف کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آج کی اس کارروائی کے دوران ہم نے ایک ایسا شادی ہال بھ مسمار کیا ہے، جس کی زمین اسکول کے لئے لی گئی تھی لیکن اس پر ایک چھوٹا سا اسکول بنا کر باقی شادی ہال بنا دیا گیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ میں نے ایڈمنسٹریٹر کراچی کو ہدایات دی ہیں کہ مذکورہ زمین کی لیز کو معطل کیا جائے اور اسکول کو کے ایم سی کے زیر انتظام لیا جائے۔ شرجیل میمن نے کہا کہ ہم نے جہاں جہاں بھی اس طرح کی کارروائیاں کی ہیں اس کو عوام نے سراہا ہے اور آج بھی عوام کی جانب سے جو مثبت ردعمل سامنے آرہا ہے یہ اس بات کو ثابت کررہا ہے کہ اب عوام اپنے بچوں کے ہاتھو ں میں کلاشنکوف یا ہتھیار کی بجائے قلم اور انہیں اسٹریٹ کرائم میں ملوث ہونے کی بجائے ایک قابل فخر انسان اور پاکستانی بنانا چاہ رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ کارروائی اس وقت تک جاری رکھی جائے گی جب تک ہم تمام تجاوزات کا خاتمہ نہیں کرلیتے اور سرکاری زمینوں کےء ساتھ ساتھ کھیلوں کے میدان، پارکس اور دیگر رفاہی و فلاہی پلاٹس کو ان قبضہ مافیا سے خالی نہیں کروالیتے۔ شرجیل میمن نے کہا کہ میں یہ بات ایک بار پھر واضح کردینا چاہتا ہوں کہ اس سلسلے میں نہ مجھ پرکسی قسم کا کوئی دباؤ ہے اور نہ ہی میں کسی قسم کا کوئی دباؤ قبول کروں گا۔ انہوں نے کہا کہ میری وزارت جائے تو بھلے جائے لیکن میں جب تک محکمہ بلدیات کا وزیر ہوں کوئی غیر قانونی شادی ہال یا دیگر تجاوزات باقی نہیں رہنے دوں گا۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ جن جن شادی ہالز کو مسمار کیا جاچکا ہے ان کی جگہ دوبارہ کوئی شادی ہال نہیں بن رہا ہے اور جو زمین جس مقصد کے لئے فراہم کی گئی ہے اگر اس پر وہ مقصد پورا نہیں کیا گیا تو اس زمین کی لیز کو معطل کردیا جائے گا۔ ایک اور سوال کے جواب میں شرجیل میمن نے کہا کہ میں چیف جسٹس آف پاکستان سے پرزور اپیل کرتا ہوں کہ وہ سپریم کورٹ کے واضح احکامات کے باوجود ان لوگوں کو حکم امتناعی دینے والی ماتحت عدالتوں کے ججز کے خلاف سوموتو ایکشن لیں جو سرکاری زمینوں پر قائم تجاوزات کے خلاف ہماری مہم کی رہ میں رکاوٹ بن رہے ہیں۔ ایک اورسوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ کراچی کو روشنیوں کا شہر دوبارہ سے بنانے کے لئے ہم وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ کے تہہ دل سے مشکور ہیں کہ جنہوں نے اس شہر میں تمام اسٹریٹ لائٹس کو دوبارہ سے روشن کرنے اور اس شہر میں سڑکوں کی مرمت کے لئے ہماری درخواست کو منظور کیا ہے اور ہمیں خصوصی گرانٹ دینے کی سمری منظور کرلی ہے اور جلد ہی محکمہ خزانہ سے یہ فنڈز ہمیں مل جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم اس مہم کے دوران پانی، سیوریج اور کچی آبادیوں کے مسائل کے حل میں بھی کوشاں ہیں اور چائنا کٹنگ کے نام پر سرکاری زمینوں پرقبضوں کے خلاف بھی جلد مہم شروع کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اب تک محکمہ بلدیات کے ماتحت اداروں میں سے ایک ہزار سے زائد گھوسٹ ملازمین کی فہرستوں کو حتمی شکل دے دی گئی ہے، جبکہ جرائم میں ملوث محکمہ کے ملازمین کی ملازمتوں کوبھی ختم کیا جائے گا۔ اس موقع پر علاقہ مکینوں کی ہزاروں کی تعداد میں موجودگی میں وزیر اطلاعات و بلدیات ان میں گھل مل گئے اور ان کے مسائل کو سنا اور انہیں یقین دہانی کرائی کہ پانی اور دیگر مسائل کو بھی جلد سے جلد حل کرلیا جائے گا۔ اس موقع پر عوام نے صوبائی وزیر کی جانب سے کئے جانے والے اقدامات پر ان کی حمایت میں نعرے بازی کی اور تالیاں بجا کر ان کے ان اقدام کو سراہا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

- Advertisment -

Most Popular

سرجانی ٹاون، گھرمیں چھریوں کے وار سے ایک خاتون ومرد قتل، ریسکیو ذرائع

کراچی: سرجانی ٹاون سیکٹر 4 ڈی میں گھر میں چھریوں کے وار سے ایک خاتون و مرد قتل، ریسکیو کے مطابق دونوں...

کورونا کیسز میں اضافہ، کراچی میں متعدد سرکاری اسکول بند

کراچی :کورونا کیسز میں اضافہ کے پیش نظر ضلع ملیر کے متعدد سرکاری اسکول بند کردیئے گئے ہیں،ضلع ملیر کے 8 سرکاری...

کراچی میں آئندہ 4 روز کے دوران رات میں موسم سرد ہوسکتا ہے،محکمہ موسمیات

کراچی: محکمہ موسمیات نے آئندہ دنوں شہر میں موسم سرد ہونے کی نوید سنادی۔ محکمہ موسمیات کے ترجمان خالد ملک کے مطابق...

تمام شہری گھر سے باہر نکلنے پر ماسک کے استعمال کو یقینی بنائیں( این سی او سی)

کراچی:: نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر نے گھروں سے باہر نکلنے پر ماسک کا استعمال لازمی قرار دے دیا۔ این سی او...