Wednesday, October 28, 2020
Home Trending فلسطین پر صہیونیوں کا قبضہ کسی صورت قبول نہیں کریں، سراج الحق

فلسطین پر صہیونیوں کا قبضہ کسی صورت قبول نہیں کریں، سراج الحق

CIMG0107کراچی،         مظلوم و نہتے فلسطینی مسلمانوں سے اظہار یکجہتی اور اسرائیل بمباری کے خلاف لاکھوں مرد و خواتین، نوجوان بچے اور بزرگ سڑکوں پر نکل آئے، شاہراہ فیصل پر عظیم الشان ملین مارچ کا انعقاد، لاکھوں مردو خواتین نے امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق کی قےادت میں بلوچ کالونی پل سے ایف ٹی سی بلڈنگ تک پیدل مارچ کےا اور تاریخ کا سب سے بڑا احتجاج ریکارڈ کرایا۔

لبیک لبیک یا غزہ لبیک کے فلک شگاف نعروں کی گونج میں امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے مسلمان بیت المقدس کی آزادی کے لیے اپنی جان ومال قربان کرنے کے لیے تیار ہیں، فلسطین پر صہیونیوں کا قبضہ کسی صورت قبول نہیں کریں گے‘ حکمران اسرائیل کے خلاف اعلان جہاد کریں توعوام ساتھ دینے کے لیے تیارہیں، اگرحکمرانوں نے اپنا فرض ادا نہ کیا تو 18کروڑ پاکستان کے مسلمان اپنا فرض ادا کریں گے، آج کا عظیم الشان غزہ ملین مارچ عالمی برادری اور بڑی طاقتوں کے لےے بھی اےک پےغام ہے کہ عالم اسلام کے مسلمان فلسطین اور مسلمانوں کے قبلہ اول بیت المقدس پر اسرائیلی قبضہ تسلیم کرنے کے لیے تیار نہیں۔

غزہ ملین مارچ سے حماس کے رہنما خالد مشعل (ٹیلی فونک ) اپوزیشن لیڈر خوشید شاہ ،سابق امیر جماعت اسلامی پاکستان سید منور حسن، جماعة الدعوة کے مرکزی رہنما عبدالرحمن مکی، امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن، مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما سلیم ضیا، جمعیت علمائے پاکستان کے مرکزی نائب صدر ڈاکٹر صدیق راٹھور، جے یو آئی کے مولانا عمرصادق، اقلیتی مسیحی رہنمایونس سوہن، مسلم لیگ کے نہال ہاشمی، شیعہ ایکشن کمیٹی کے مرزا یوسف حسین جماعة الدعوہ کراچی کے امیر ڈاکٹر مزمل ہاشمی، تنظیم اسلامی کے صدر عامرخان ،عوام مسلم لیگ کے محفوظ یارخان، پی ڈی پی کے بشارت مرزا،مرکزی جمعیت اہلحدیث کے نائب صدرمولانا یوسف قصوری،پیپلزپارٹی کراچی کے رہنما قادرپٹیل،اسلامی تحریک پاکستان کے رہنما ناظر تقوی، اسلامی جمعیت کراچی کے ناظم حافظ محمد بلال‘ کراچی پریس کلب کے صدر امتیاز خان فاران،پی اے ٹی کے خان محمد بلوچ اور دےگر نے بھی خطاب کےا ۔جب کہ نظامت کے فرائض اسامہ رضی نے ادا کےے۔

سراج الحق نے خطاب کر تے ہوئے مزےد کہا کہ آج انسانوں کا یہ سمندر کراچی کی تاریخ کا سب سے بڑا اجتماع ہے، جذبوں سے سرشار، شوق جہاد، شوق شہادت کے عزم کے ساتھ آج اعلان کررہے ہیں کہ ہم بیت المقدس کی آزادی کے لیے اہل فلسطین کے ساتھ ہیں، میں دیکھ رہاہوں کے آج اہل کراچی کادل فلسطینیوں کے ساتھ دھڑک رہا ہے، آج کے ملےن مارچ نے عالم اسلام کا اےجنڈا واضح کر دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ اسلام آبادمیں جو مسئلہ چل رہا ہے لوگ اس کی طرف متوجہ ہیں لیکن آج ثابت ہوا لوگ مکہ اورمدینہ منورہ کی طرف دیکھ رہے ہیں لوگ مسجد اقصی کی آزادی کی طرف دیکھ رہے ہیں ، غزہ کے عوام کے لیے جماعت اسلامی کراچی نے5کروڑ روپیہ دیا ہے ، میں کہنا چاہتا ہوں پیسہ کیا چیز ہے موقع مل جائے توہم اپنی جان بیت المقدس کی آزادی کے لیے دینے کے لیے تیار ہیں ، بیت المقدس۔آج اس پر یہودیوں کاقبضہ ہے جب تک ہماری جان ہے ہم اس کو کبھی قبول نہیں کریں گے آج اسرائیل کے پاس ہرطرح کی عسکری طاقت موجود ہے ۔آج عالم اسلام کے پاس بڑے معدنی اورعسکری وسائل موجود ہیں اس کے باجود فلسطین جل رہا ، غزہ کے نوجوان جل رہے ہیں بستیاں برباد اورقبرستان آباد ہورہے ہیں ، آج اسلام آباد کے حکمران اپنے مفادات کی سیاست کے لیے رو رہے ہیں ان مسلم حکمرانوں نے آج تک او آئی سی کا اجلا س نہیں بلایا، میںنے سعودی عرب، ایران کے سربراہوں کو خط لکھا، وزیراعظم نوازشریف سے ملاقات کی ۔ اگرحکمرانوں نے اپنا فرض ادا نہ کیا تو 18کروڑ پاکستان کے مسلمان اپنا فرض ادا کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ امریکا اورناٹو افواج افغانستان سے نکلنے پرمجبورہوگئے،ہمارے پاس تو ایٹم بم بھی ہے‘ ایٹم بم کو ہماری حفاظت کرنی ہے یا ہمیں ایٹم بم کی حفاظت ، افواج پاکستان کے سربراہ سے اپیل کرتا ہوں کہ پاکستان ایک نظریہ اورفلسفہ کا نام ہے‘اس نظریے کی کوئی سرحد نہیں ہے اورہمیں اس نظریے کی حفاظت کرنی ہے، دنیا بھر میںجہاں کہیں بھی اس نظریے کی حفاظت کی ضرورت پڑی تو کریں گے،انہوں نے کہا کہ میں خالد مشعل کو یقین دلاتا آج ہر پاکستانی اہل غزہ کے ساتھ ہے‘جس تحریک میں خواتین اوربچے شامل ہوجائیں اورتلاوت اوردورد کا ورد کریں اس تحریک کو کوئی کامیاب ہونے سے نہیں روک سکتا۔

انہوں نے کہا کہ حکمران امریکا سے ڈرنے کے بجائے غیرت کا مظاہرہ کریں ، انہوں نے کہا کہ میں نے نواز شریف سے کہا کہ آئین نے پورے ملک کو ایک رکھا ہے ، مجھے خطرہ ہے کہ اگریہ لوگ آپس میں لڑپڑے تو پاکستان کا نقصان ہوگا، مجھے کہا گیا کہ آپ کس کے ایلچی ہیں میں کہا میں غریب عوام کا نمائندہ ہوں ، میں نہیں چاہتا کہ آپ لوگوں کی آپس کی لڑائی کی وجہ سے مارشل لا نہ آجائے،، مارشل لا نے ہمیشہ پاکستان کو نقصان پہنچایا ہے ،ہم بھی الیکشن ریفارم چاہتے ہیں ہم متناسب نمائندگی کانظام چاہتے ہیں تاکہ عوام کی حقیقی نمائندے آگے آسکیں ،امید ہے عمران خان بھی حکمت اوردانائی کاراستہ اختیارکریں گے، کچھ لوگ جلتی پرتیل ڈال کرتماشابنانا چاہتے ہیں ہم نے دونوں سے وعدے لیے کہ ہم نے ایسا راستہ اختیارکرنا ہے کہ پاکستان متحد اورمستحکم بن جائے۔

خالد مشعل نے ٹیلیفونک خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میں اپنے عزیز پاکستانی بھائیوںکو غزہ کے مسلمانوں سے ایکجہتی کرنے پر خراج تحسین پیش کرتا ہوں،اللہ تعالیٰ آپ سب کو جزائے خیر عطافرمائے میرے، آج اسرائیل نے غزہ میں ظلم کا بازارگرم کیا ہوا ہے مگرہم آخری وقت تک اسرائیل کا مقابلہ کرتے رہیں گے، اسرائیل ہمارے عزم کو کمزورنہیں کرسکتا۔

خورشید شاہ نے کہا کہ آج پاکستان کی تمام جماعتوں کی حمایت اورلاکھوں افراد کاسمندراس بات کاثبوت ہے کہ ہم ہرنظریہ، ہرسوچ سے بالاتر ہوکر فلسطینیوں کے ساتھ ہیں،آج غزہ کے مظلوم مسلمان مائیں بہنیں اوربیٹیاں پکاررہے ہیں کہ ہمیں صہیونیوں سے نجات دلائی جائے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کے حکمران او آئی کی کانفرنس کی طرح ایک جھنڈئے تلے جمع کریں ، اوردنیا کو بتادیں کے دنیا میں مسلمانوں پر ظلم قبول نہیں ، مصر، بوسنیااوربرما میں ظلم کسی صورت قبول نہیں۔

سید منورحسن نے کہا کہ جماعت اسلامی کی کوششوں سے پورے ملک میں عوام اہل غزہ سے اظہاریکجہتی اوران کے لیے کچھ کرنے کے لیے گھروں سے نکلے ہیں، ہم غزہ کی حماس کو سلام پیش کرتے ہیں ، لبنان کی حزب اللہ اورکشمیر کی حز ب المجاہدین کو سلام پیش کرتے ہیں ، غزہ کے محاصرے کوختم کیا جائے، اسرائیل نے مغربی کنارے پر جتنی آبادیاں بنائی ہیں انہیں ختم کیا جائے اورانہیں مزید گھربنانے سے روکا جائے۔جن لوگوں نے اخوان المسلمون کو دہشت گرد قرارد دیا ہے وہ بزدل ہیں ۔حکومت اورفوج دونوں کو غزہ کے مسلمانوں کے لیے اپنا کرادار ادا کرنا چاہیے، صرف یوم فلسطین منانا کافی نہیں ہے اہل غزہ کی مدد کے لیے بڑے پیمانے پر اسرائیل کے خلاف محاذ بنانے اورعوامی بیدار کی ضرورت ہے ‘مسلمانوں کو دہشت گرد کہنے والے استعمار کے ایجنٹ ہیں اورمسلمانوں میں جذبہ جہاد ختم کرنا چاہتے ہیں۔لوگوں میں بیداری کی لہر کو پھیلانا چاہیے۔

حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ ہم اپنے دشمن کو بھی جانتے ہیں اپنے دشمن کو بھی جانتے ہیں ہمارادشمن امریکا اوراسرئیل اورہمارے دوست اسرائیل بمباری کا سامنا کررہے ہیں ہمارے پاس ایٹم بم موجود ہے لیکن غزہ کے بچے پتھر کے ایٹم بم سے مقابلہ کررہے ہیں اوراسرائیل ان کی مزاحمت ختم کرنے میں کامیاب نہیں ہوا۔انہوں نے مسلم حکمرانوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ خدا کے واسطے خواف غفلت سے جاگ جاو¿ خاموشی ترک کرو۔

سلیم ضیاءنے کہا کہ جماعت اسلامی کودنیا بھر میں سب سے بڑی ریلی منعقد کرنے پر مبارکباد پیش کرتا ہو، امریکا اوراس کے ایجنٹوں نے دوہرے معیاراختیارکیے ہوئے ہیں، کئی برس سے مظالم پر امریکا اورمغربی ممالک نے نہ صرف مجرمانہ خاموشی اختیار کی ہوئی ہے بلکہ خود حملوں میں ملوث ہیں اوراسرائیل کو اسلحہ فراہم کررہے ہیں۔آج فلسطین کے حالات اس بات کا تقاضا کررہے ہیں کہ پاکستان میں یکجہتی ہو۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

- Advertisment -

Most Popular

توہین رسالت،جماعت اسلامی کا کل کراچی میں احتجاج کا اعلان

فرانس میں گستاخانہ خاکوں کے خلاف جماعت اسلامی کا کراچی میں کل احتجاج کا اعلان، جماعت اسلامی کراچی کے امیر حافظ نعیم...

اسٹیل ٹاون، پولیس کی بڑی کارروائی مختلف وارداتوں میں ملوث 2 ملزمان گرفتار

کراچی: اسٹیل ٹاون پولیس کی بڑی کارروائی، مختلف وارداتوں میں ملوث 2 ملزمان گرفتار، پولیس کے مطابق گرفتار ملزمان شہری سے لوٹ...

پاک بحریہ کا اینٹی شپ میزائلز فائرنگ کا کامیاب مظاہرہ،ہمہ وقت تیار ہیں،نیول چیف

پاک بحریہ کا اینٹی شپ میزائلز فائرنگ کا کامیاب مظاہرہ،پاک بحریہ نے شمالی بحیرہ عرب میں سطح سمندر اور ہوا سے اینٹی...

فیس بک نے ’پڑوس سروس‘ پرغورشروع کردیا

فیس بک نے پڑوس کے علاقوں اور وہاں موجود سروس کے تعارف کے لیے ایک نئی سہولت پر غور شروع کردیا،...