Saturday, July 31, 2021
- Advertisment -

مقبول ترین

کراچی میں لاک ڈاؤن کا نفاذ، شہر کے مختلف مقامات پر پولیس کی ناکہ بندی

کراچی میں لاک ڈاؤن کے نفاذ کے بعد پولیس نے مختلف سڑکوں پر ناکے لگادیے اور غیر ضروری طور پر گھروں سے نکلنے والوں...

سول اسپتال میں کتوں نے ڈاکٹر سمیت 3 افراد کو کاٹ لیا

سول اسپتال کراچی میں آوارہ کتوں نے لیڈی ڈاکٹر سمیت 3 افراد کو کاٹ لیا، اسپتال انتظامیہ کے مطابق واقعہ اسپتال کے اندر سرجیکل...

صوبے میں لاک ڈاؤن پر تاجروں کے تحفظات جائز ہیں، ناصر شاہ

وزیر اطلاعات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ صوبے میں لاک ڈاؤن پر...

کراچی میں آج سے غیر ضروری گھر سے نکلنے اور ڈبل سواری پر پابندی عائد

محکمہ داخلہ سندھ نے کراچی میں لاک ڈاؤن کی نئی پابندیوں کا نوٹیفکیشن جاری کردیا، نوٹیفکیشن کے مطابق کراچی میں آج سے جزوی لاک...

پاکستان میں ہر سال 4لاکھ 20 ہزار افراد دمے کا شکار ہوتے ہیں

TB dama1کراچی: پاکستان سمیت دنیا بھرمیں تپ دق سے بچاؤ کا دن منایا گیا۔ ٹی بی کا مرض عالمی سطح پر بھی اور خاص طور پر پاکستان اور دیگرترقی پذیر ممالک میں خطرناک صورت اختیار کرچکا ہے۔ پاکستان میں 18 لاکھ سے زائد افراد اس بیماری میں مبتلا ہیں جس میں سالانہ چار لاکھ بیس ہزار نئے مریضوں کا اضافہ ہو رہا ہے۔ٹی بی ایک ایسا مرض ہے جو ایک فرد سے دوسرے میں منتقل ہوجاتا ہے۔ عالمی ادارہ صحت کے مطابق اس وقت دنیا کی ایک تہائی آبادی اس مرض سے متاثر ہوچکی ہے۔ اس میں سے 90 فیصد مریض ترقی پذیر ملکوں میں ہیں۔ ہرسال 90 لاکھ کے لگ بھگ افراد اس مرض کا شکار اور 20 لاکھ موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔ ٹی بی کی علامات میں دو ہفتے سے زائد کھانسی رہنا، بھوک کا نہ لگنا، بخار ہونا، وزن میں مسلسل کمی اور دیگرعوامل شامل ہوتے ہیں۔صوبہ سندھ میں ٹی بی سے متاثرہ مریضوں کی تعداد ساڑھے چار لاکھ سے زائد ہے۔ جبکہ ہر دو سیکنڈ میں ایک پاکستانی ٹی بی جیسے مہلک مرض کا شکار بن رہا ہے۔