Saturday, July 31, 2021
- Advertisment -

مقبول ترین

صوبے میں لاک ڈاؤن پر تاجروں کے تحفظات جائز ہیں، ناصر شاہ

وزیر اطلاعات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ صوبے میں لاک ڈاؤن پر...

کراچی میں آج سے غیر ضروری گھر سے نکلنے اور ڈبل سواری پر پابندی عائد

محکمہ داخلہ سندھ نے کراچی میں لاک ڈاؤن کی نئی پابندیوں کا نوٹیفکیشن جاری کردیا، نوٹیفکیشن کے مطابق کراچی میں آج سے جزوی لاک...

گاڑی پارکنگ کی اجازت نہ دینے پر خاتون کا قتل

نارتھ ناظم آباد میں گھر کے باہر گاڑی پارک کرنے سے منع کرنے پر خاتون جان سے ہاتھ دھو بیٹھی۔ پولیس کے مطابق نارتھ...

سندھ حکومت کا کراچی میں 8 اگست تک مکمل لاک ڈاؤن کا فیصلہ

کورونا کی بگڑتی صورتحال کے پیش ںظر سندھ حکومت نے کراچی میں کل سے 8 اگست تک مکمل لاک ڈاؤن کا فیصلہ کرتے ہوئے...

ٹرمپ دھمکیاں،دفاع پاکستان کونسل کااحتجاج،مظاہرہ

2-1-2018cکراچی دفاع پاکستان کونسل کے تحت امریکا کی جانب سے پاکستان کو دھمکیوں اور جماعة الدعوة و فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے خلاف حکومتی اقدام کی مذمت میں نمائش چورنگی پر بڑا احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔ جس سے خطاب کرتے ہوئے سیاسی و مذہبی رہنماؤں نے کہا ہے کہ امریکی صدر دھمکیوں کے ذریعے پاکستان اور محب وطن جماعتوں پر اثر انداز ہونے کی ناکام کوشش کر رہے ہیں۔ زلزلہ، سیلاب و دیگر قدرتی آفات میں فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کا کردار روز روشن کی طرح عیاں ہے۔ کرپشن میں ڈوبی حکومت اور حکمران فلاح عامہ کے لیے ایف آئی ایف جیسا کردار ادا نہیں کرسکتے۔ امریکی دھمکیوں پر ڈھیر ہونے والی حکومت اگر فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کی ریلیف سرگرمیوں کی راہ میں رکاوٹ کھڑی کرے گی تو بھرپور مزاحمت کریں گے۔ حکمران اپنے خلاف عدلیہ کے فیصلوں سے توجہ ہٹانے کے لیے محب وطن جماعتوں اور ان کی ریلیف سرگرمیوں پر قدغنیں لگا رہے ہیں۔ دفاع پاکستان کونسل کے پلیٹ فارم سے بڑی تحریک کا آغاز کردیا ہے، 28 جنوری کو مزار قائد پر عظیم الشان ”دفاع امت کانفرنس“ کا انعقاد کیا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار ملی مسلم لیگ پاکستان کے نائب صدر مزمل اقبال ہاشمی، عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے رہنما قاضی احسان احمد، جمعیت علمائے پاکستان کے رہنما قاضی احمد نورانی، جمعیت علمائے اسلام (س) کے رہنما مفتی حماد مدنی، آل پاکستان سنی تحریک کے رہنما مطلوب اعوان، جامعہ دراسات الاسلامیہ کے مدیر مفتی عبداللطیف، فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے وائس چیئرمین شاہد محمود، جماعة الدعوة کراچی کے رہنما حافظ عمران بھٹی، حافظ محمد امجد و دیگر نے نمائش چورنگی پر مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر شرکاءنے امریکا کے خلاف اور جماعة الدعوة و فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے حق میں زبردست نعرے بازی کی اور امریکی پرچم بھی نذر آتش کیا۔ ملی مسلم لیگ کے نائب صدر مزمل اقبال ہاشمی نے کہا کہ کرپشن کرنے والے خدمت کرنے والوں پر قدغنیں لگا رہے ہیں۔ حکمران اپنے خلاف عدلیہ کے فیصلوں سے توجہ ہٹانے کے لیے امریکا کی ہاں میں ہاں نہ ملائے۔ یہ ملک نظریہ اسلام کی بنیاد پر حاصل کیا گیا، محب وطن جماعتوں کی راہ میں رکاوٹیں کھڑی کرنے والے کامیاب نہیں ہوسکیں گے۔ انہوں نے کہا کہ دفاع پاکستان کونسل کے پلیٹ فارم سے دینی و سیاسی جماعتوں نے بڑی تحریک کا آغاز کردیا ہے۔ اب ملک گیر سطح پر دفاع پاکستان و دفاع اسلام کی زبردست تحریک چلاکر ملک دشمن قوتوں کو مضبوط پیغام دیں گے۔ 28 جنوری کو مزار قائد پر عظیم الشان ”دفاع امت کانفرنس“ اسی سلسلے کی کڑی ہے۔ دینی و سیاسی قیادت امریکا و بھارت کی پاکستان مخالف سازشوں کے خلاف متحدہ کردار ادا کرے، پوری قوم آپ کے شانہ بشانہ کھڑی ہے۔ عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے رہنما قاضی احسان احمد نے کہا کہ انسانیت کی بہتری کے لیے کردار ادا کرنے سے ایک قدم بھی پیچھے نہیں ہٹیں گے۔ انسانیت کی خدمت ہر پلیٹ فارم سے جاری رہے گی۔ امریکا صدر کیا ساری دنیا بھی اکھٹی ہوجائے محب وطن رفاہی جماعتوں کو کام سے نہیں روکا جاسکتا۔ جمعیت علمائے پاکستان کے رہنما قاضی احمد نورانی نے کہا کہ امریکا نے بیت المقدس کے مسئلے پر بھی امداد بند کرنے کی دھمکی دی تھی، لیکن وہ بری طرح ناکام رہا۔ امریکی صدر دنیا کی توجہ اپنی ناکامیوں سے ہٹانے کے لیے دھمکیوں پر اتر آیا ہے۔ پاکستان امریکی دھمکیاں کسی خاطر میں نہ لائے۔ فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے کردار کو کسی صورت محدود نہیں کیا جاسکتا۔ جمعیت علمائے اسلام (س) کے رہنما مفتی حماد مدنی نے کہا کہ امریکا کی ہاں میں ہاں ملانے والے حکمرانوں نے ہمشیہ قوم و ملک کو نظر نداز کیا۔ ہم زلزلہ و سیلاب میں سب سے پہلے پہنچنے والی فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے ساتھ کھڑے ہیں۔ آل پاکستان سنی تحریک کے رہنما مطلوب اعوان نے کہا کہ حکومت حافظ سعید اور ان کی تنظیموں پر قدغنیں لگاکر امریکا و بھارت کو خوش کر رہی ہے۔ امداد بند کی دھمکیوں سے محب وطن پاکستانیوں کو ڈرایا نہیں جاسکتا۔ فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے وائس چیئرمین شاہد محمود نے کہا کہ ایف آئی ایف نے بلوچستان میں اپنی رفاہی سرگرمیوں سے علیحدگی کی تحریکوں کو ناکام بنایا ہے۔ تھر میں سرکاری اسپتال نہ چلاسکنے والی حکومت ایف آئی ایف کا کردار کیسے ادا کرے گی۔ فلاح کا کام کرپشن کرنے والے نہیں کرسکتے۔ غریبوں کی امیدوں کا سہارا بننے والوں کی راہ میں رکاوٹیں کھڑی کرنا شرمناک ہے۔