Sunday, June 20, 2021
- Advertisment -

مقبول ترین

ڈپٹی کمشنر ملیر کی ہدایت پر اتائی ڈاکٹروں کےخلاف آپریشن

ڈپٹی کمشنر ملیر کی ہدایت پر پپری ٹائون میں اتائی ڈاکٹروں کے خلاف آپریشن، متعدد کلینکس اور میڈیکل اسٹورز سیل کردیئے گئے، ذرائع کے...

سپریم کورٹ، اسٹیل ملز ملازمین کی ترقی کی درخواست مسترد

سپریم کورٹ نے اسٹیل مل ملازمین کی ترقی سےمتعلق درخواست  مسترد کردی، سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں کیس کی سماعت  کے دوران چیف جسٹس...

مون سون بارشیں،نکاسی کے انتظامات مکمل ہیں، ایڈمنسٹریٹر کراچی کا دعویٰ

مون سون بارشوں سے نمٹنے کےلئے انتظامات مکمل کرلئے ہیں، ایڈمنسٹریٹر کراچی کا بڑا دعویٰ سامنے آگیا، ذرائع کے مطابق ایڈمنسٹریٹر کراچی لیئق احمد...

فیس بک کا نیا فیچر،ایڈمن کو پوسٹ میں تبدیلی کا اختیار مل گیا

 فیس بک نے نیا شاندار فیچرمتعارف کرادیا، میڈیا رپورٹ کے مطابق ایڈمن اب آن لائن کمیونیٹیز کے کسی بھی ایسے ممبر پر پابندی لگاسکتے...

نوازشریف نے کراچی جلسے میں تقریر کیوں نہیں کی؟ اعتزاز احسن کا بڑا دعویٰ

پاکستان پیپلز پارٹی کے سینئر راہنما بیرسٹر اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ نوازشریف کو ایک بریگیڈیر کی کال گئی۔ جس کے بعد انہوں نے رضاکارانہ طور پر اپنی مرضی سے مقررین میں سے اپنا نام واپس لیا۔ نوازشریف تقریر کرنا چاہیں تو انہیں مولانا فضل الرحمن، بلاول بھٹو یا مریم نواز نہیں روک سکتیں۔

نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے بیرسٹر اعتزاز احسن نے مزید کہا کہ میں چیلنج کرتا ہوں کہ نوازشریف تقریر کرکے دکھائیں۔ پہلے بھی یہ این آر او کرکے پاکستان سے چلے گئے تھے۔ آج بھی ٹیلی فون کال پر انہوں نے تقریر سے معذرت کرلی۔

اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ نوازشریف کے چھوٹے بھائی شہبازشریف اپنی مرضی سے جیل میں بیٹھے ہوئے ہیں۔ انہوں نے اپنی درخواست ضمانت واپس لی ہے۔ اس کا مطلب ہے کہ وہ خود چاہتے ہیں کہ جیل میں رہیں۔ جیلوں میں جس طرح خفیہ ملاقاتیں آسانی سے ہوتی ہیں، ویسے کسی اور طریقے سے ممکن نہیں ہوتیں۔ کسی کو کیا معلوم کہ شہبازشریف کے ساتھ اس وقت کون ملاقاتیں کررہا ہے، کس کے ساتھ کھانا کھارہے ہیں؟ دونوں بھائی ایک خاص ایجنڈے کے تحت چل رہے ہیں۔

راہنما پیپلز پارٹی نے حکومت کو بھی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ یہ بے وقوفوں کی حکومت ہے۔ ایک وزیر کہہ رہا ہے کہ واجب القتل ہیں، دوسرا کہہ رہا ہے کہ واپس نہیں آنے دیں گے، وزیراعظم انہیں ذلیل کرنے کی بات کررہے ہیں۔ اگر یہی باتیں ہوں گی تو برطانیہ کسی صورت نوازشریف کو پاکستان کے حوالے نہیں کرے گا۔ اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ کیپٹن (ر) صفدر نے قائداعظم کے مزار کو پامال کیا۔ میں وہاں نعرے بازی دیکھ کر لرز گیا ہوں۔ اس سے پاکستانیوں کو تکلیف ہوئی ہے۔