Tuesday, July 27, 2021
- Advertisment -

مقبول ترین

ضلع کیماڑی،بلدیہ سب ڈویژن کی 2 یوسیز میں اسمارٹ لاک ڈاون

ضلع کیماڑی میں کورونا کیسز میں اضافے کے بعد 27 جولائی سے 9 اگست تک اسمارٹ لاک ڈاون نافذ، نوٹی فکیشن جاری، ڈپٹی کمشنر...

کے الیکٹرک نااہلی کی دھوم سینیٹ کی قائمہ کمیٹی میں بھی پہنچ گئی

کے الیکٹرک نااہلی دھوم سینیٹ کی قائمہ کمیٹی میں پہنچ گئی، سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے کابینہ ڈویژن کے اجلاس میں ق لیگ کے...

فیڈرل بی ایریا، شہری نے فائرنگ کرکے 2 ڈاکو مارڈالے

ڈاکو راج کے سامنے پولیس بے بس، شہریوں نے اپنی عدالت لگالی، ذرائع کے مطابق فیڈرل بی ایریا بلاک 16 میں موٹرسائیکل سوار2 ڈاکووں...

گرفتاری ،جرمانوں کا خوف،6 بجے دکانیں بند، تاجر گھروں کو روانہ

 سندھ حکومت کے شام چھ بجے کاروبار بند کرنے کے احکامات پر عملدرآمد شروع، شہر کی بیشتر مارکیٹیں بند ہوگئیں، ذرائع کے مطابق زینب...

امریکا میں 14 سالہ بچی نے کورونا کے علاج میں مددگار مالیکیول دریافت کرلیا

مریکی نشریاتی ادارے سی این این کے مطابق ریاست ٹیکساس کے علاقے فریسکو کی رہائشی نوجوان طالبہ انیقہ چیبرولو کو ’تھری ایم ینگ سائنٹسٹ چیلنج 2020‘ جیتنے پر 25 ہزار ڈالر نقد اور کم عمر سائنس دان 2020 کے اعزاز سے نوازا گیا ہے۔

آٹھویں جماعت کی طالبہ انیقہ نے ایک ایسا مالیکیول دریافت کیا تھا جو سارس کورونا وائرس کے پروٹین کے ساتھ جڑنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔ یہ دریافت کورونا کےعلاج میں مددگار ثابت ہوسکتی ہے۔

نوعمر طالبہ نے جب تحقیق کا آغاز کیا تو اس کا محور ایک ایسے مالیکیول کو دریافت کرنا تھا جو انفلوئنزا وائرس کے پروٹین کے ساتھ جڑنے کی صلاحیت رکھتا ہو تاہم کورونا وبا کے شروع ہونے پر انہوں نے تحقیق کا رخ کورونا وائرس کی طرف موڑ دیا تھا۔

سائنس دانوں نے اس دریافت کو کورونا کے علاج میں مددگار قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس تحقیق سے کورونا ویکسین بنانے والی کمپنیاں اور محقق فائدہ اُٹھا سکتے ہیں اور اگر ایسا ہوجاتا ہے تو اس کم سن سائنس دان کو عالم گیر شہرت مل سکتی ہے۔