Saturday, July 31, 2021
- Advertisment -

مقبول ترین

سول اسپتال میں کتوں نے ڈاکٹر سمیت 3 افراد کو کاٹ لیا

سول اسپتال کراچی میں آوارہ کتوں نے لیڈی ڈاکٹر سمیت 3 افراد کو کاٹ لیا، اسپتال انتظامیہ کے مطابق واقعہ اسپتال کے اندر سرجیکل...

صوبے میں لاک ڈاؤن پر تاجروں کے تحفظات جائز ہیں، ناصر شاہ

وزیر اطلاعات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ صوبے میں لاک ڈاؤن پر...

کراچی میں آج سے غیر ضروری گھر سے نکلنے اور ڈبل سواری پر پابندی عائد

محکمہ داخلہ سندھ نے کراچی میں لاک ڈاؤن کی نئی پابندیوں کا نوٹیفکیشن جاری کردیا، نوٹیفکیشن کے مطابق کراچی میں آج سے جزوی لاک...

گاڑی پارکنگ کی اجازت نہ دینے پر خاتون کا قتل

نارتھ ناظم آباد میں گھر کے باہر گاڑی پارک کرنے سے منع کرنے پر خاتون جان سے ہاتھ دھو بیٹھی۔ پولیس کے مطابق نارتھ...

ناقص فیلڈنگ نے ٹیم مینجمنٹ کی نیندیں اڑا دیں

ٹی ٹوئنٹی فارمیٹ میں وقت کم اور مقابلہ سخت والی بات ہوگی، اس لیے ایک ڈراپ کیچ یا غلط اسٹروک کا خمیازہ شکست کی صورت میں اٹھانا پڑ سکتا ہے،جمعرات کو ٹریننگ کے دوران سب سے زیادہ توجہ فیلڈنگ کی خامیاں دور کرنے پر مرکوز رکھی گئی،فیلڈنگ کوچ عبدالمجید نے طویل سیشن میں کھلاڑیوں کو اونچے کیچز کی پریکٹس کرائی، باؤنڈری کے قریب سے گیند تھرو کرنے اور وکٹوں کو نشانہ بنانے کی مشق بھی کرائی گئی۔

خوشدل شاہ، شاہین شاہ آفریدی،موسٰی خان، حارث رؤف اور ظفر گوہر کو خاص طور پر متحرک رکھا گیا،وکٹ کیپرز محمد رضوان اور روحیل نذیر نے الگ سیشنز کیے۔

میدان کے وسط میں موجود پریکٹس پچ پر فخرزمان،عبداللہ شفیق، حیدر علی اور افتخاراحمد نے پاور ہٹنگ کا سلسلہ جاری رکھا، بابر اعظم نے پہلے پیسرز بعد میں اسپنرز کا سامنا کرتے ہوئے دلکش اسٹروکس کھیلے، حالیہ سیریز میں پہلا میچ کھیلنے کے منتظر محمد حفیظ نے وسطی پچ پر بیٹنگ کے ساتھ میدان کے ایک طرف لگائے نیٹ میں الگ سیشن بھی کیا۔

شاہین شاہ آفریدی،وہاب ریاض،حارث رؤف، محمد حسنین اور موسٰی خان نے لائن و لینتھ بہتر بنانے پرکام کیا، عماد وسیم، عثمان قادر اور ظفر گوہر نے اسپن کاجادو جگانے کی کوشش میں مختلف تجربات کیے۔

شاداب خان ہلکی پھلکی ٹریننگ کرتے رہے لیکن پریکٹس نہیں کی، بعد ازاں پی سی بی نے تصدیق کردی کہ محدود طرز کی کرکٹ میں نائب کپتان پہلے ٹی ٹوئنٹی میچ میں شرکت نہیں کریںگے۔

میڈیکل ٹیم کے مطابق شاداب کی انجری میں بہتری آرہی ہے تاہم انھیں مزید آرام دینے کا فیصلہ کرلیا گیا، سیریز کے اگلے دونوں میچز میں شرکت کا فیصلہ مناسب وقت پر کیا جائے گا،آل راؤنڈر نے 23 اکتوبر کو قذافی اسٹیڈیم لاہور میں کھیلے گئے پہلے انٹرا اسکواڈ پریکٹس میچ کے بعد ٹانگ میں کھچاؤ محسوس کیا تھا، بحالی فٹنس کی کوشش جاری رہی لیکن وہ تینوں ون ڈے میچزکے لیے دستیاب نہیں ہوسکے،اب انھیں مزید آرام دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے، مینجمنٹ دورئہ نیوزی لینڈ سے قبل ان کی فٹنس کے حوالے کوئی خطرہ نہیں مول لینا چاہتی۔