Wednesday, May 12, 2021
"]
- Advertisment -

مقبول ترین

چاندرات کاروبار،تاجروں کی چیف جسٹس اور آرمی چیف سے اپیل

آل سٹی تاجراتحاد ایسوسی ایشن نے چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس گلزار احمد اور چیف آف آرمی اسٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ سے اپیل...

لیاری بہار کالونی میں دکانداروں کا رینجرز اہلکاروں پر تشدد

لیاری کے بہار کالونی کے دکاندار آپے سے باہر، کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد کرانے کےلئے آنے والے رینجرز اہلکاروں پر تشدد، پولیس...

 معمولی سی خواہش (سیدہ ہاشمی)

اس کی خواہش تھی بڑی کوچ (بس) میں سفر کرنا اور جب سے اسے دین محمد عرف دینو نے بڑی کوچ میں نظر آنے...

لاکھوں روپے مالیت کے سامان کی اسمگلنگ کی کوشش ناکام

کراچی ائیرپورٹ پر لاکھوں روپے مالیت کے الیکٹرونکس سامان کی اسمگلنگ کی کوشش ناکام، ذرائع کے مطابق کسٹم حکام نے کراچی سے بیرون ملک...

محکمہ بلدیات سندھ تمام امور ڈیجیٹلائز کرنے کا آغاز

محکمہ بلدیات سندھ کی تاریخ میں پہلی دفعہ تمام امور کو مکمل طور پر ڈیجیٹلائز کرنے کا آغاز کردیا گیا۔


سیکرٹری لوکل گورنمنٹ ہاوئسنگ و ٹاون پلاننگ نجم احمد شاہ کی ہدایت پر محکمہ بلدیات سندھ کو مکمل طور پر ڈیجیٹلائز کرنے کے منصوبے پر کام کا آغاز کردیا گیا ہے جس کے تحت محکمہ جاتی تمام امور کو شفافیت سے ہم آہنگ کرنے کے لئے آن لائن پورٹل سے منسلک کیا جائے گا۔

اس اہم پیش رفت کی تفصیلات کے متعلق سیکرٹری بلدیات سندھ نجم احمد شاہ نے بتایا کہ محکمہ لوکل گورنمنٹ ہاوئسنگ و ٹاون پلاننگ کو جدید تقاضوں اور عالمی معیار سے ہم آہنگ کرنے کے لئے اس منصوبے کا آغاز کیا جارہا ہے جس کے تحت تمام دفتری امور کی انجام دہی کے لئے آن لائن پورٹل دستیاب ہوگا جس میں تمام عملے کی حاضری ریکارڈ سمیت، سروس ریکارڈ، سرکاری خط و کتابت اور دیگر ضروری امور کا اندراج باآسانی عمل میں آجائے گا۔

اس اہم پیش رفت کے سلسلے میں تمام سرکاری خط کتابت کو QR کوڈ سے مزین کیا جارہا ہے تاکہ کسی بھی جعل سازی کا شائبہ بھی برقرار نہ رہے۔ محکمے میں موصول اور روانہ ہونے والی تمام ڈاک کا احوال بھی اس آن لائن پورٹل کے ذریعے محفوظ بنایا جائے گا۔ کون کا افسر کس عہدے پر کس ڈسٹرکٹ یا تحصیل میں فرائض منصبی سر انجام دے رہا ہے اس کی تفصیلات بھی آن لائن دستیاب ہوں گی۔

اس کار آمد اور منفرد منصوبے کو عملی جامع پہنانے والے سیکرٹری بلدیات نجم احمد شاہ کا کہنا تھا کہ محکمہ بلدیات سندھ کو ترقی اور کامیابی کی شاہراہ پر مستقل طور پر گامزن کرنے کے لئے اس اقدام کا عمل میں لایا جانا ضروری تھا جس پر بفضل خدا کام کا آغاز کردیا گیا ہے اور عنقریب اس مخلصانہ کاوش کے ثمرات نظر آنا شروع ہوجائیں گی۔