Sunday, November 29, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

کراچی کی چند خوبصورت مقامات کی ڈرون فوٹیج

کراچی پاکستان کا سب سے بڑا اور آباد شہر ہے۔ سابقہ دارالحکومت ہونے کی وجہ سے ، یہ ایک ممکنہ تجارتی...

جامعہ کراچی کی پوائنٹس سروس

وفاقی سطح پر قائم تعلیمی کمیٹی نے اعلان کیا ہے کہملک بھر کے تعلیمی ادارے 15 ستمبر...

پلاسٹک آلودگی ( کرن اسلم)

اگر آپ اپنے ارد گرد نظر دوڑائیں تو آپ کو کسی نہ کسی صورت میں پلاسٹک کی اشیا ضرور ملیں گی۔ مثال کے طور...

بہادرآباد، ڈکیتی کی بڑی واردات،شہری40 لاکھ روپے سے محروم

بہادرآباد میں ڈکیتی کی بڑی واردات، شہری 40 لاکھ روپے سے محروم، ذرائع کے مطابق بہادرآباد شاہ...

کثیرالمنزلہ عمارتوں پر پابندی سے مہنگائی بڑھے گی،آباد

abadکراچی ایسوسی ایشن آف بلڈرز اینڈ ڈیولپرز (آباد) کے چیئرمین محمد عارف یوسف جیوا نے کہا ہے کہ کراچی میں کثیرالمنزلہ عمارتوں کی تعمیرپر پابندی کے باعث مہنگائی کا طوفان آنے والاہے جس کی وجہ سے شہر ایک بار پھر بدامنی کی لپیٹ میں آجائے گا،وفاقی ،سندھ حکومتوں نے کوئی تدارک نہ کیا تو ملکی معیشت کو ناقابل تلافی نقصان پہنچے گا۔چیئرمین آباد نے کہا کہ بلند عمارتوں کی تعمیر پر پابندی کے باعث کراچی میں 6 ماہ سے تعمیراتی کام ٹھپ ہوکر رہ گئے ہیں جس کے نتیجے میں میگا سٹی میں ہونے والی 900 ارب روپے کی سرمایہ کاری رک گئی اور تعمیراتی شعبے سے وابستہ انجینئرز، آرکیٹکچر سمیت 6 لاکھ افراد بے روزگار ہوگئے ہیں۔عارف جیوا نے وفاقی ،صوبائی حکومتوں اور اعلیٰ عدلیہ سے اپیل کی ہے پاکستان کی معیشت کو تباہ ہونے سے بچانے کے لیے اقدامات اٹھائے جائیں۔ تعمیراتی سرگرمیاں رک جانے کے باعث تعمیراتی شعبے کی ذیلی صنعتوں پر بھی شدید دبائو ہے،اگر پابندی مزید برقرار رہی تومزید 20 لاکھ افراد بے روزگار ہونے کا خطرہ ہے

Open chat