Wednesday, January 27, 2021
"]
- Advertisment -

مقبول ترین

سی این جی اسٹیشن پھر بند، شہری مشکلات شکار

سی این جی پھر بند، سوئی سدرن گیس کمپنی نے بدھ کی صبح 8 بجے سے ہفتہ کی صبح 8 بجے تک کراچی سمیت...

گلشن اقبال، گاڑی پر فائرنگ سے میاں بیوی زخمی

 شہر میں امن وامان کی صورت حال خراب، گلشن اقبال موتی محل کے قریب شاپنگ مال کے سامنے گاڑی پر فائرنگ سے میاں بیوی...

پاکستان ریلوے کا آن لائن بکنگ کا نظام بیٹھ گیا

سسٹم کی خرابی یا پھر بکنگ کا رش، پاکستان ریلوے کی آن لائن بکنگ کا نظام بیٹھ گیا، شہریوں کو آن لائن بکنگ کرانے...

گورنرسندھ عمران اسماعیل سے حلیم عادل شیخ کی ملاقات

گورنرسندھ عمران اسماعیل سے پی ٹی آئی کے رہنما حلیم عادل شیخ کی ملاقات، دونوں رہنمائوں میں ملاقات کے دوران صوبے کی سیاسی صورت...

جعلی میڈیکل کالج اور ڈگریوں کے ذمے دار ڈاکٹر عاصم ہی ہیں، وزیر مملکت برائے صحت

asim hussain21کراچی: وزیر مملکت برائے صحت سائرہ افضل تارڑ نے جعلی ڈگریوں اور جعلی میڈیکل کالجز کا ذمے دار ڈاکٹر عاصم کو قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ سابق مشیر پیٹرولیم سے تفتیش کرنے والے اداروں کے ساتھ مکمل تعاون کیا جائے گا۔ پریس کانفرنس کےدوران سائرہ افضل تارڑ نے کہا کہ پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل میں گھپلوں، جعلی ڈگریوں اور جعلی میڈیکل کالجز میں ڈاکٹر عاصم کا ہاتھ تھا، وہ سامنے آنے کے بجائے پس پردہ رہ کر کام کررہے تھے۔ ڈاکٹر عاصم کے خلاف ایکشن لینے میں پی ایم ڈی سی کا اپنا قانون ہی رکاوٹ بنا ہوا تھا۔ وزیر مملکت کا کہنا تھا کہ پی ایم ڈی سی ڈاکٹر عاصم سے تحقیقات کرنے والے اداروں سے ہر ممکن تعاون کرے گی اور پی ایم ڈی سی میں گھپلوں کی تحقیقات کرکے نیب کو کیسز بھی بھجوائیں گے۔ پی ایم ڈی سی آرڈیننس کو پارلیمنٹ سے منظور کرایا جائے گا، پی ایم ڈی سی اراکین کی تعداد 81 سے کم کر کے 35 کی جائے گی ،جن میں سے 20 منتخب جب کہ 15 اعزازی نمائندے ہوں گے، اس کے علاوہ پی ایم ڈی سی میں تمام صوبوں کو بھی نمائندگی دی جائے گی۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Open chat