Monday, November 30, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

ظفراللہ جمالی کی موت، جھوٹی خبر پر عارف علوی معذرت خواہ

صدر پاکستان ڈاکٹر عارف علوی نے سابق وزیراعظم میر ظفراللہ جمالی کی موت کی غلط خبر دینے والی ٹویٹ کو ہٹادیا ، ڈاکٹر عارف...

گیس کی سپلائی بہتر ہوگئی، سوئی سدرن گیس کمپنی کا دعویٰ

سوئی سدرن گیس کمپنی کا کہنا ہے کہ تین روز قبل ہونے والی سسٹم کی خرابی دور کرلی گئی ہے، ترجمان سوئی سدرن گیس...

پیٹرول کی قیمت برقرار، ڈیزل4 روپے فی لیٹر مہنگا

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ردو بدل، پیٹرول ،مٹی کا تیل اور لائٹ ڈیزل کی قیمتیں برقرار رکھنے کا فیصلہ جبکہ ڈیزل کی قیمت...

میرظفراللہ جمالی کو دل کا دورہ، حالت تشویشناک

سابق وزیراعظم میر ظفراللہ جمالی کو دل کا دورہ ، ذرائع کے مطابق سابق وزیراعظم کو دل کا دورہ پڑنے پر اے ایف آئی...

دہشت گردوں کی تعداد 8 تھی، اردوبول رہے تھے، بس کلینر کا بیان

Safora-incident320x180کراچی،سانحہ صفورا گوٹھ کی تحقیقاتی ٹیم نے واقعے میں زخمی ہونے والے بس کلینر کا تفصیلی بیان ریکارڈ کرلیا جس کے  زخمی بس کلینر کو سخت سکیورٹی میں جائے وقوعہ کی نشاندہی کے لیے لایا گیا جس کے بعد اس کا بیان ریکارڈ کیا گیا جس میں زخمی کلینر کا کہنا تھا کہ سانحہ صفورہ گوٹھ میں ملوث دہشت گردوں کی تعداد 8 تھی جو ون ٹو فائیو موٹرسائیکلوں پر سوار تھے،ایک موٹر سائیکل سوارنے بس کو آگے آکر روکا جب کہ دیگر دہشت گرد بس کے پچھلے حصے سے اس میں داخل ہوئے۔
بس کلینر نے اپنے بیان میں مزید بتایا کہ 2 حملہ آور پینٹ اور ٹی شرٹ میں ملبوس تھے اور انہوں نے چہروں کو ہیلمٹ سے ڈھانپ رکھا تھا جب کہ تمام حملہ آور اردو میں بات چیت کررہے تھے۔ کلینر کے مطابق سڑک کے ٹوٹ پھوٹ کاشکار ہونے کی وجہ سے بس کی رفتارآہستہ تھی جس کے باعث دہشت گردباآسانی بس میں سوار ہوگئے۔

Open chat