January 16, 2021 |_16 _January _2021
- Advertisment -

مقبول ترین

ابن مریم ہوا کرے کوئی! ...

”بھائی آپ مجھے یہ سوٹ نکال کر دکھائیں گے؟ میں آپ کو دو بار کہہ چکی ہوں۔“ ”بس دو بار ، ایک بار اور...

خاتون نے بلوچ کالونی پل سے چھلانگ کر خودکشی کرلی

 بلوچ کالونی پل سے نامعلوم خاتون نے چھلانگ لگا زندگی کا خاتمہ کرلیا، ریسکیو ذرائع کے مطابق رات 9 بجے کے قریب ایک خاتون...

جہاز ضبطگی کے مسافر نجی طیارے سے پاکستان روانہ

 ملائیشیا میں پی آئی اے کے ضبط کئے گئے جہاز کے مسافروں کو نجی ائیرلائن کے ذرئعے کراچی کےلئے روانہ کرادیا گیا، لیز کے...

سی این جی اسٹیشن کی بندش میں ایک دن کا مزید اضافہ

سی این جی اسٹیشن کی بندش میں ایک اور دن کا اضافہ، ایس ایس جی سی حکام نے ہفتہ کی صبح 8 بجے سے...

اہالیان سندھ کوپانی کی فراہمی کے حوالے سے لگاتاچوتھااجلاس

cm in meetiکراچی سندھ حکومت محکمہ پبلک ہیلتھ انجنیئرنگ کے ذریعے 16.567ملین آبادی کو پینے کا پانی فراہم کررہی ہے جو 35 فیصد بنتا ہے جبکہ اس کی ڈرینیج کی اسکیمیں 12.513ملین کا احاطہ کرتی ہیں جو کہ آبادی کا 40 فیصد بنتا ہے۔یہ بات وزیر اعلیٰ سندھ نے آج وزیر اعلیٰ ہائوس میں منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔انہوں نے یہ بات آج سندھ کے لوگوں کوپینے کا صاف پانی کی فراہمی کے حوالے سے لگاتار چوتھے اجلاس کی صدار ت کرتے ہوئے کہی ۔ اجلاس میں صوبائی وزیر پبلک ہیلتھ انجینئرنگ فیاض بٹ، چیف سیکریٹری رضوان میمن ، چیئرمین پی اینڈ ڈی محمد وسیم ، پرنسپل سیکریٹری وزیر اعلیٰ سندھ سہیل راجپوت ، سیکریٹری پی ایچ ای تمیز الدین کھیڑو اور دیگر متعلقہ افسران نے شرکت کی۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ محکمہ پبلک ہیلتھ انجینئرنگ پینے کے پانی کی فراہمی کے حوالے سے ایک نہایت اہم ادارہ ہے اور یہ نکاسی کی سہولیات کی فراہمی کا بھی ذمہ دار ہے۔وزیر اعلیٰ سندھ نے صوبائی وزیر اور سیکریٹری پی ایچ ای کو ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ آپ (محکمہ پبلک ہیلتھ انجینئرنگ) آپ صوبے کے لوگوں کے وسیع تر مفاد میں یہ کرتے ہونہیں تو آپ کے پاس ایک وسیع نیٹ ورک اور اسکیمیں ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Open chat