Monday, November 30, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

آغا سراج پر ایک سال بعد فرد جرم عائد

کراچی کی احتساب عدالت میں نیب کی جانب سے آغا سراج درانی اور ان کے اہلخانہ پر ایک ارب 61 کروڑ کے غیر قانونی...

تیز رفتار ٹینکر کی موٹر سائیکل کو ٹکر

جام صادق پل پر تیز رفتار ٹینکر کی موٹر سائیکل کو ٹکر کے نتیجے میں خاتون سمیت 3 افراد جاں بحق ہو گئے۔ پولیس نے...

ایم کیو ایم رہنما عادل صدیقی کورونا کے باعث انتقال کرگئے

ایم کیو ایم کے سابق رکن سندھ اسمبلی اورسابق صوبائی وزیرعادل صدیقی کورونا کے باعث انتقال کرگئے۔ نجی ہسپتال کے ترجمان کے مطابق ایم...

ناظم آبادفائرنگ واقعے میں پولیس قصوروارہے،وزیراعلیٰ

murad ali shah 8کراچی، وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے جناح اسپتال میں زیر علاج سابق مشیر پیٹرولیم ڈاکٹر عاصم حسین سے ملاقات کی ، ملاقات کے بعد میڈ یا سے گفتگو کرتے ہوئے مراد علی شاہ نے ڈاکٹر عاصم کو سیاسی قیدی قرار دیتے ہوئے کہا کہ پیپلز پارٹی عدالتوں پر پورا یقین رکھتی ہے ڈاکٹر عاصم کی رہائی بھی ایک پراسس کے ذریعےعمل میں آئی،وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ نیشنل ایکشن پلان جب تک جاری ہے اس وقت تک ایپکس کمیٹی کےاجلاس ہوں گے تاہم آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع یا نئے چیف کافیصلہ وزیراعظم کا ہے۔انشورنس پالیسی کے حوالے سے وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ پالیسی پرعملدرآمد یکم نومبر سے شروع ہوچکا ہے سندھ کے اٹھارہ سے پیسنٹھ سالہ افراد کی حادثاتی موت میں اہل خانہ کو ایک لاکھ روپے دیئے جائیں گے ،متاثرہ خاندان کو پیسے بیوروکریسی کے ذریعے نہیں بلکہ انشورنس کمپنی سے براہ راست ملیں گے۔وزیراعلیٰ سندھ اس موقع پر اسلام آباد میں پی ٹی آئی کارکنان پر تشدد کی مذمت کی جبکہ کراچی کے علاقے ناظم آباد میں مجلس پر فائرنگ کے واقعے میں پولیس کو قصوروار ٹھہرایا۔

Open chat