Saturday, November 28, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

خاقان مرتضیٰ ڈی جی سول ایوی ایشن تعینات

سول ایوی ایشن کا ڈی جی تعینات، ذرائع سی اے اے کے مطابق فلائٹ لیفٹیننٹ ریٹائرڈ خاقان...

ملازمت سے برطرفی، اسٹیل مل کے ملازم کو دل کا دورہ

ملازمت سے برطرفی کا سن کر اسٹیل مل کے ملازم کو دل کا دورپڑگیا، حبیب الرحمن کو اس...

سندھ بار کونسل انتخابات، وکلا کا احتجاج رنگ لے آیا

وکلا کا احتجاج رنگ لے آیا، سندھ بارکونسل کےانتخابات ملتوی کرنے کا نوٹی فکیشن واپس. ایڈووکیٹ جنرل...

لاک ڈاؤن ، سندھ حکومت کا نیا نوٹیفکیشن جاری

کورونا لاک ڈاؤن کے حوالے سے سندھ حکومت نے نیا نوٹیفکیشن جاری کردیا ہے. نوٹیفکیشن میں کاروباری...

کردار کشی جاری رہی تو کوئی کرکٹ میں نہیں آئے گا، مصباح الحق

Misbah-Pakistan Captainپاکستان کے ٹیسٹ کپتان مصباح الحق کو خدشہ ہے کہ ذاتیات پر مبنی تنقید اور کردار کشی جاری رہی تو والدین اپنے بچوں کو کرکٹ میں لانا چھوڑ دیں گے۔مصباح الحق ورلڈ کپ کے اختتام پر ون ڈے انٹرنیشنل سے ریٹائر ہوچکے ہیں۔ وہ ٹیسٹ کرکٹ جاری رکھیں گے۔ مصباح الحق کو ہمیشہ چند سابق ٹیسٹ کرکٹرز اور میڈیا کے کچھ حلقوں کی جانب سے کافی تنقید کا سامنا رہا ہے۔مصباح الحق نے انٹرویو میں اس تنقید پر سخت برہمی ظاہر کی۔ ان کے خیال میں تنقید صرف کھیل اور کارکردگی پر ہونی چاہیئے۔ اس میں ذاتیات اور کردار کشی نہیں ہونی چاہیئے۔ ٹی وی چینلز کو اپنی پالیسی کا از سر نو جائزہ لینا چاہیئے۔ کہیں اخلاقی حد تو پار نہیں ہو رہیں۔ اگر یہ سلسلہ جاری رہا تو لوگ اپنے بچوں کو اسپورٹس میں نہیں بھیجیں گے۔ مصباح الحق کا کہنا ہے کہ ان پر ہونے والی تنقید سے ان کی فیملی کو ذہنی اذیت کا سامنا کرنا پڑا۔ وہ صبر و تحمل سے چیلنجز سے نمٹنے کی کوشش کرتے ہیں۔مصباح الحق نے تسلیم کیا کہ ورلڈ کپ سے قبل حالات ان کے لیے پریشان کن تھے۔ وہ خود ان فٹ تھے۔ کارکردگی بھی اچھی نہیں تھی لیکن خوداعتمادی کی بدولت مشکل سے نکلنے میں کامیاب رہے۔ ون ڈے کرکٹ کی بے پناہ مصروفیت سے فارغ ہونے کے بعد وہ اب اپنی فیملی پر توجہ دے سکیں گے۔ مصباح الحق اپنے علاقے میانوالی کے لیے بھی کچھ کرنا چاہتے ہیں جہاں بنیادی سہولیات کا بھی فقدان ہے۔

Open chat