Wednesday, November 25, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

واٹربورڈ ان ایکشن،نادہندگان کے پانی کے کنکشن منقطع

واٹربورڈ کا نادہندگان کے خلاف گرینڈ آپریشن تیز، واجبات ادا نہ کرنےوالے سیکڑوں صارفین کے پانی کے...

بختاور کی منگنی کی تقریب جمعہ کو بلاول ہاوس میں ہوگی

بختاور بھٹو زرداری کی منگنی کی تقریب جمعہ کو بلاول ہائوس کلفٹن کے اوپن ایریا میں ہوگی، بختاور...

پی ٹی آئی رہنما فردوس نقوی کا وزیراعلیٰ سندھ پر انوکھا الزام

تحریک انصاف کے ارکان سندھ اسمبلی نے وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ پر انوکھا الزام عائد کردیا، اپوزیشن...

معذور افراد کا احتجاج جاری، یقین دہانیوں کے باوجود مطالبات پورے نہیں ہو سکے

disable picکراچی: پریس کلب کے باہر گذشتہ کئی ہفتوں سے احتجاجی کیمپ میں بیٹھے اندرون سندھ سے آئے ہوئے معذور افرادکا احتجاج تاحال جاری ہے۔ صوبائی وزراء نثار کھوڑو، مظفر شجرہ، منظور وسان، سمیت پیپلز پارٹی کی رہنماشیری رحمن اور سابق وزیر داخلہ رحمن ملک کی یقین دہانیوں کے باوجود معذور افراد کے مطالبات پورے نہیں ہوئے۔ احتجاجی کیمپ میں موجود افراد کے سرپرست عبداللہ خان نے کراچی اپ ڈیٹس سے کو تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ وہ ملازمتوں میں دو فیصد کوٹے کے تخت ملازمتوں کے حصول کیلئے پر امن احتجاج گذشتہ کئی ہفتوں سے کر رہے ہیں۔ سندھ کے محتلف7 اضلاع سے معذور مرد و خواتین ہمارے ساتھ احتجاج کیلئے آئے ہیں۔ انہوںنے کہا کہ 2013 مین صوبائی وزیر اطلاعات نے 15 افراد کو ملازمت فراہم کرنے کے سا تھ عدہ ہ کیا تھاکہ دیگر افراد کو بھی محتلف صوبائی محکموں میں ملازمت فراہم کر دی جائیگی، تاہم آج تک ان کا یہ وعدہ پورا نہیں ہوا۔ انہوں نے بتایا کہ صوبائی وزراء اور پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنمائوں سے ملاقاتیں ہوئی ہیں جنہوں نے مثبت قدم اٹھانے کا وعدہ کیا تھا لیکن روٹی کپڑا اور مکان کا نعرہ لے کر ووٹ لینے والی جماعت نے جو خود کو غریبوں کا سب سے بڑا ہمدرد کہتی ہے اس نے ابھی تک ہمارے مطالبا ت پو رے نہیں کئے ہیں۔ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں کہا کہ ہمارے کیمپ میں تمام افراد تعلیم یافتہ ہیں جو ایک عام شہری کی طرح ملک کے تعمیر اور ترقی میں اپنا کردار ادا کرناچاہتے ہیں۔ انہوں نے حکومت سے مطالبہ کی وہ معذوروں کیلئے محتص کوٹے پر انہیں فوری طور پرفراہم دیں۔

Open chat