کراچی، ہنگامی حالت سے نمٹنے والے ادارے غیر فعال

pakistan-high-resolution-emergency-concept-KTTMRK پاک بھارت کشیدہ صورتحال میں کسی بھی ہنگامی حالت سے نمٹنے کے لیے سول ڈیفنس اور ڈزاسٹرز مینجمنٹ کے ادارے اہمیت کے حامل ہوتے ہیں اور ان دونوں اداروں سمیت محکمہ صحت اور دیگر فائر بریگیڈ اور ہیوی مشینری رکھنے والے اداروں کے پاس وسائل اور افرادی قوت کی شدید کمی ہے ۔

 

شہرقائد میں سائرن بجانے کا نظام بھی عرصہ دراز سے خراب اور ناکارہ پڑا ہے کسی بھی حملے یا ہنگامی صورتحال میں شہریوں کو آگاہ کرنے کے لیے سائرن بجایا جاتا ہے جو سول ڈیفنس کے ماتحت ہے لیکن شہر میں اس سہولت کا عملی طور پر فقدان ہے۔

 

 سول ڈیفنس اور فائر بریگیڈ جیسے اہم ادارے سرکاری حلقوں میں یتیم ادارے قرار دیئے جاتے ہیں ان کو نہ تو مطلوبہ فنڈز ملتے ہیں نہ ہی افرادی قوت۔ دشمن کے حملے کی صورت میں شہریوں کو کس طرح اپنا تحفظ اور شہری اداروں کے ساتھ تعاون کرنا چاہیے اس سلسلے میں بھی نہ تو کسی ٹریننگ کا اہتمام کیا گیا ہے نہ ہی کوئی آگاہی دی گئی ہے شہریوں کے لیے بنکر اور تہہ خانے بھی نہیں ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Top