Thursday, December 3, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

کھانوں پر پابندی، شادی ہالز ایسوسی ایشن کا مظاہرہ

شادی ہالز میں کھانوں پر پابندی کےخلاف آل پاکستان شادی ہالز ایسوسی ایشن کا پریس کلب کے باہر مظاہرہ، اس موقع پر رہنمائوں کا...

ضلع وسطی کے مزید علاقوں میں اسمارٹ لاک ڈاؤن

کورونا وائرس کے بڑھتے کیسز کے پیش نظر کراچی ضلع وسطی کے مزید علاقوں میں اسمارٹ لاک ڈاؤن نافذ، لاک ڈاؤن والے علاقوں میں...

اسٹاک ایکسچینج میں کاروبار کا مثبت آغاز

 پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروبار کا مثبت آغاز، اسٹاک ایکسچینج میں 377 پوائنٹس کا اضافہ، 100 انڈیکس کی 337 پوائنٹس کے اضافے سے 42...

النور سوسائٹی میں صحافی کو لوٹ لیا گیا

تھانہ سمن آباد کی حدود النور سوسائٹی بلاک 19 میں ڈکیتی کی واردات، صبح سویرے نیوز ون ٹی وی کے نیوز پروڈیوسر اور پی...

صدر کو خط بھیجنا کوئی غیر قانونی اقدام نہیں تھا ، گورنر سندھ

ishrat ul Ibad Khanکراچی، گورنر سندھ ڈاکٹرعشرت العبادخان نے تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ صولت مرزاکےلیے خط لکھا تھا میرا صدر کو خط بھیجنا کوئی غیر آئینی یا غیر قانونی اقدام نہیں تھا۔نجی ٹی وی کے پروگرام میں خصوصی طور پر گفتگو کرتے ہوئے گورنر سندھ ڈاکٹر عشرت العباد نے کہاکہ صولت مرزا کے اہل خانہ نے رحم کی اپیل کے لئے رابطہ کیا تھا، صولت مرزاکے گھروالوں نے اپیل کی تھی اس لیے صولت مرزاکی سزاکم کرنے کی سفارش کی۔انہوں نے کہا کہ صدرنے اختیاراستعمال کرتے ہوئے سفارش رد کردی تھی۔انہوں نے کہا کہ یہ صدر کی اپنی صوابدید پر ہے کہ کس کو سزا دی جائے اور کس کو نہ دی جائے۔ایک سوال نے جواب میں انہوں نے کہا کہ صولت مرزا کے الزام پر اس وقت کوئی تبصرہ نہیں کر سکتا،مجھے اپنے رب کو جواب دینا ہے،صولت مرزا نے جو الزام لگایا وہ ان کا ذاتی فعل ہے۔انہوں نے کہا کہ جو بھی ہمارے دروازے پر آئے گا اس کی اپیل پر نظر ثانی کی جائے گی۔

Open chat