Saturday, January 23, 2021
"]
- Advertisment -

مقبول ترین

ادارہ نورحق، سعید غنی کی سراج الحق سے ملاقات

وزیرتعلیم سندھ سعید غنی کی ادارہ نور حق آمد، امیر جماعت اسلامی سراج الحق سے ملاقات، ذرائع کے مطابق سعید غنی نے ملاقات میں...

سندھ حکومت کا شاپنگ مالز مالکان کےلئے بڑا فیصلہ

 سندھ حکومت کا بڑا فیصلہ، ہفتے بھر رات گئے تک تمام شاپنگ مالز کو کھلے رہنے کی اجازت، ذرائع کے مطابق سندھ حکومت نے...

مراد علی شاہ اور علی زیدی کے وزیراعظم کو خطوط

جمعہ کے روز کراچی انسفارمیشن پلان کے اجلاس میں وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ اور وفاقی وزیر علی زیدی کے مابین ہونےوالی تلخ کلامی...

شہر بھر میں 24 گھنٹے کےلئے سی این جی اسٹیشن کھل گئے

آٹھ دن کی بندش کے بعد سی این جی اسٹیشن اتوار کی صبح 8 بجے سے پیر کی صبح 8 بجے تک کھلے رہیں...

کراچی کے عوام کے ساتھ سرکلرریلوے کے نام پر بڑے مذاق کا انکشاف

کراچی کے عوام کے ساتھ سرکلرریلوے کے نام پر بڑے مذاق کا انکشاف،
بیل گاڑی کی رفتارسے چلنے والی ٹرین کے سی آرکا19نومبرکوافتتاح کیاجائے گا
سپریم کورٹ کے آنکھوں میں دھول اورعوام کومایوس کرنے کا کاانتظام کرلیاگیا،
ٹرین بیل گاڑی کی رفتار سے چلے گی،فاصلہ دوگھنٹے اور 45میں طے کرے گی،
کلومیٹرٹریک20سال پرانہ باقی ٹریک پرسٹیشن زیادہیں اس لیے رفتارکم رکھی گئی ہے،ترجمان

کراچی کے عوام کے ساتھ سرکلرریلوے کے نام پر بڑے مذاق کانکشاف،بیل گاڑی کی رفتارسے چلنے والی ٹرین کے سی آرکا19نومبرکوافتتاح کیاجائے گا،سپریم کورٹ کے آنکھوں میں دھول اورعوام کومایوس کرنے کا کاانتظام کرلیاگیا،60کلومیٹرکافاصلہ2گھنٹے اور 45میں طے کرے گی۔ترجمان کاکہناہے کہ کے سی آرکا14کلومیٹرکاٹریک 20سال پرانہ جبکہ باقی ٹریک پرسٹیشن زیادہیں اس لیے رفتارکم رکھی گئی ہے سٹی ٹرین کی رفتار کم رکھی جاتی ہے۔اس خبررساں ادارے کودستیاب سرکاری دستاویزات کے مطابق پاکستان ریلوے نے 19نومبر کوچلنے والے کراچی سرکلرریلوے کاشیڈول جاری کردیاہے جسکے تحت دن میں چارٹرین دونوں طرف سے چلیں گئیں کل8ٹرینیں 3گھنٹے کے وقفہ سے دونون طرف چلیں گئیں۔اورنگی سے پہلی ٹرین صبح چھ بج کرتیس منٹ پر نکلے گی۔جبکہ پیپری سے صبح 7بجے پہلی ٹرین نکلے گی اورنگی سے نکلنے والے ٹرین اپنے آخری سٹاپ پیپری پر9بج کر15منٹ پر پہنچے گی اس طرح پیپری سے نکلنے والے ٹرین اپنے آخری سٹاپ پر 9بج کر45منٹ پر پہنچے گی۔ٹرین اپنے 60کلومیٹرکاسفر 2گھنٹے اور 45منٹ میں مکمل کرے گی۔اس طرح دن میں آٹھ ٹرینیں چلائی جائیں گئیں۔ٹرین کی رفتار اس قدر کم رکھی گئی ہے کہ سرکلر ریلوے پر سفر بیل گاڑی یاتانگہ کی رفتار سے سفر معلوم ہوگا۔ذرائع کاکہناہے کہ ریلوے حکام نے سپریم کورٹ کے حکم کے توہین عدالت کانوٹس ملنے کے بعد جلد بازی میں افتتاح کرنے کافیصلہ کیا اس سے پہلے ریلوے ٹریک پر اس طرح کام نہیں کیاگیاجس طرح کرناچاہیے تھاخستہ حال پٹریاں بھی تبدیل نہیں کی گئیں اور سپریم کورٹ کے آنکھوں میں دھول ڈالنے کے لیے قیمتی انسانی جانوں کوخطرے میں ڈالاجارہاہے کے سی آر کے 14کلومیٹرجو ٹریک بحال بھی کی گئی ہے اس کی حالت انتہائی خراب ہے اس14کلومیٹرکے ٹریک پر رفتاردس سے 15کلومیٹررکھی گئی ہے جبکہ بیل گاڑی کی رفتار سے کے سی آر کے افتتاح کے حوالے سے ریلوے حکام سے رابطہ کیاگیا اور ان سے معلوم کیاگیاکہ بیل کی رفتار سے چلنے والی مسافر ٹرین کوچلانے کی ضرورت ہے اس پر ریلوے ترجمان موقف دیتے ہوئے کہاکہ شہروں میں چلنے والی ٹرین کی رفتارکم رکھی جاتی ہے ہر پانچ کلومیٹرکے بعد سٹیشن ہے اس لیے رفتارکم رکھی گئی ہے اس لیے گاڑی نے رکنا ہے اورچلناہے اس سے زیادہ رفتار سے گاڑی چل نہیں سکتی ہے۔اسکے ساتھ ٹریک بھی خستہ حال ہے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Open chat