Saturday, November 28, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

لانڈھی، بھینسوں کے باڑوں میں آتشزدگی

لانڈھی نمبر 4 کے قریب مویشیوں کے 3 باڑوں میں آگ لگ گئی، 3 بھینسیں ہلاک، آگ بجھانے...

ڈیفنس پولیس مقابلہ، ملزمان کا کرمنل ریکارڈ جاری

ڈیفنس فیز 4 میں ہونے والے مبینہ پولیس مقابلے کی تفصیلات پولیس حکام نے جاری کردیں۔ ڈیفنس مقابلہ...

کراچی پریس کلب: ڈیموکریٹس پھر کامیاب (نورالھدیٰ شاہین)

10347810_10152480971901916_5492572579643825372_nہفتہ کی صبح خلاف معمول ذرا جلدی تیار ہوکر کراچی پریس کلب کی جانب نکل پڑا۔ یہاں کئی ہفتوں سے جاری انتخابی مہم حتمی مرحلے میں پہنچ چکی تھی۔ بلکہ یہ اس فیصلہ کن مرحلے کا دن تھا۔ اس سال 2پینل دی ڈیموکریٹس اور پروگریسو نے الیکشن میں حصہ لیا۔ ایک طرف بائیں بازو کی صحافت کا علمبردار گروہ ”پروگریسیوپینل “ جبکہ دوسری طرف ”دائیں بازو کے صحافیوں کا مشترکہ اتحاد ”دی ڈیموکریٹس “ کے امیدواربڑی گرم جوشی سے پریس کلب میں متحریک دکھائی دیتے تھے۔

10402465_10205489024093743_2898971393013800770_nکلب کے مرکزی دروازے کے باہر دونوں پینلز کے کارکنان اپنے انتخابی امیدواروں کے ناموں پر مبنی پمفلٹ لیے کھڑے ہر آنے والے سے یوں ملتے جیسے برسوں کی یاری دوستی ہو۔ دروازے کے اندر دونوں طرف دو مخالف پینلز کے استقبالیہ کیمپ ایک دوسرے کے مدمقابل لگے ہوئے تھے۔ جہاں قائدین بیٹھے ممبران کو ہدایات جاری کر رہے تھے۔ کلب کے احاطے میں مہمانوں کے لیے کرسیاں اور میز لگائی گئی تھیں جہاں لوگ بیٹھے خوش گیپیوں میں مصروف نظر آئے، جبکہ بلڈنگ کے پچھواڑے میں پولنگ بوتھ قائم کیے گئے تھے، جہاں اراکین مکمل یکسوئی اور اطمینان کے ساتھ اپنے ووٹ کاسٹ کرتے نظر آئے۔
الیکشن کے موقع پر معمول کے مطابق آنے والے صحافیوں کے علاوہ
10171655_507275062746990_5330772410107946293_nصحافت کے نامور افراد کے چہرے بھی کثرت سے نظر آ رہے تھے۔ جن میں مختلف اخبارات کے مدیروں کے علاوں سینئر صحافیوں کی بڑی تعداد شامل ہے۔ جن میں سے معروف کالم نگار وسعت اللہ خان، اطہر ہاشمی اور ہمایوں عزیز خاص طور پر قابل ذکر ہیں۔صبح سے شام تک پولنگ کا عمل بلا کسی وقفے کے جاری رہا۔ شام 5 بجے وقت ختم ہونے پر پولنگ کا عمل بند کردیا گیا، چہل پہل کم ہوگئی، دھڑکنیں تیز ہونے لگیں، چہروں کے رنگ پل پل بدلتے رہے، گنتی کا عمل رات 9بجے تک اختتام کو پہنچا۔ نتائج کا اعلان ہوگیا۔ دائیں بازوکے صحافیوں کا مشترکہ پینل” دی ڈیموکریٹس “ ایک بار پھر بھاری اکثریت کے ساتھ کلین سویپ کرچکا تھا، اس سے قبل مسلسل چار سال سے ڈیموکریٹ پینل میدان مارتا آرہا ہے، یوں پانچویں مرتبہ اس پینل کے منتخب نمائندے کراچی پریس کلب کے مختلف عہدوں پر فائز ہوں گے۔
10801782_10152952088719394_5139406866631055431_nالیکشن کمیٹی کے جاری کردہ نتائج کے مطابق کراچی پریس کلب کے صدر کے لیے دی ڈیموکریٹس کے فاضل جمیلی نے558 ووٹ حاصل کیے جبکہ ان کے مد مقابل”پروگریسیو“ پینل کے انور سن رائے نے 374ووٹ حاصل کیے۔نائب صدر کے امیدوار نواب قریشی نے 507، ان کی مد مقابل میراج فاطمہ نے 316، خزانچی کے امیدوار محمد حنیف اکبر نے 459، ان کے مقابل امیدوار عاجز جمالی نے 356، سیکریٹری کے امیدوار علاﺅالدین خانزادہ نے 541ان کے مقابل ایوب جان نے 251، جوائنٹ سیکریٹری کے امیدوار محمد رضوان بھٹی نے 538اور ان کے مقابل فصاحت محی الدین نے 278ووٹ حاصل کیے۔مجلس عاملہ کی تمام نشستوں پر دی ڈیموکریٹس کے تمام امیدوار کامیاب ہوگئے جن میں حنا ماہ گل نے 557،طارق ابوالحسن نے 519، کفیل الدین فیضان نے 462، سجاد عباسی نے 462، آغاکرم علی شاہ نے 456، صدیق چوہدری نے 453اور منظور چانڈیو نے 436ووٹ حاصل کیے۔یوں اگلے سال کے دسمبر تک دی ڈیموکریٹ کراچی پریس کلب کے تمام انتظامی امور اور نظم و نسق کو سنبھالنے کے فرائض انجام دیں گے۔

nhshaheen26@gmail.com

Open chat