Tuesday, October 27, 2020
Home خاص خبریں کاروبار حکومت معیاری تعلیمی نظام یقینی بنانے کے لیے پُرعزم ہے، وزیرمملکت برائے...

حکومت معیاری تعلیمی نظام یقینی بنانے کے لیے پُرعزم ہے، وزیرمملکت برائے تعلیم

KCCI Logoکراچی، وزیر مملکت برائے تعلیم و پیشہ ورانہ تربیت محمد بلیغ الرحمان نے کہا ہے کہ حکومت مو¿ثر نظام تعلیم کے حصول کے لیے کوشاں ہے تاہم موجودہ حکومت کے لیے میلینئم ڈیویلپمنٹ گولز کاحصول دشوار ہے جس کے تحت2015تک ملک بھرکے بچوں ، لڑکے اور لڑکیوں کو پرائمری اسکول تک یکساں تعلیم حاصل کرنے کے قابل بنانا ہے لیکن موجودہ حکومت ہر ممکن کوشش کررہی ہے کہ 2025کے ویژن کے تحت اس مقصد کو حاصل کیا جائے۔ کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری(کے سی سی آئی ) کے دورے کے موقع پراجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ اس موقع پربزنس مین گروپ (بی ایم جی) کے وائس چیئرمین انجم نثار، کراچی چیمبر کے صدر عبداللہ ذکی ودیگر بھی اس موقع پرموجود تھے۔
وزیر مملکت برائے تعلیم و پیشہ ورانہ تربیت محمد بلیغ الرحمان نے بتایاکہ یہ امر قابل تشویش ہے کہ پاکستان میں 15ملین بچے اسکول نہیں جاتے جبکہ اسکول چھوڑنے کی شرح کاجائزہ لیاجائے تو معلوم ہو گا کہ اسکول جانے والے مجموعی بچوںمیں سے ایک تہائی بچے مختلف وجوہات کی بنا پر اسکول جانا چھوڑ دیتے ہیں۔ حکومت بچوں کے اسکول چھوڑنے کی وجوہات کابغور جائزہ لے رہی ہے اوراس صورتحال سے نمٹنے کے لیے موثر اقدامات بھی عمل میں لارہی ہے۔وزیرمملکت نے کہاکہ حکومت تعلیم کی مد میںزیادہ فنڈز مختص کرنے سے قاصر ہے جس کی وجہ ٹیکس ٹو جی ڈی پی کی شرح کا کم ہو نا ہے لیکن اب ٹیکس ٹو جی ڈی پی میں 9فیصد کی بہتری آئی ہے اوریہ مزید بہتری کی طرف جارہی ہے اور اگرشرح میں اضافہ ہوتا رہا تو تعلیم کے شعبے کے لیے فنڈزمیںمزید اضافہ کیا جاسکے گا۔انہوںنے کہاکہ آئندہ 4سے5سالوںمیں تعلیم کے شعبے کے لیے مختص کیے جانے والے فنڈز کو موجودہ 2فیصد سے 4فیصد تک لے جایاجاسکے گا۔
بزنس مین گروپ(بی ایم جی ) کے وائس چیئرمین انجم نثار نے ناقص تعلیمی نظام پر تبادلہ خیال کرتے ہوئے کہاکہ پاکستان کا سب سے بڑا مسئلہ ناقص نظام تعلیم ہے جسکے نتیجے میںغربت،بے روزگاری،توانائی بحران،احتجاج،دھرنے جیسے مسائل پید اہو رہے ہیں۔ موجودہ تعلیمی نظام مکمل طور فرسودہ ہو چکاہے جس پر نظرثانی کی ضرورت ہے تاکہ بچوں کومعیاری تعلیم کا حصول ممکن بنایاجاسکے اس مقصد کے لیے درست طریقے سے تمام وسائل بروئے کار لانا چاہیے۔وہ ممالک جو کبھی ہم سے پیچھے تھے آج اگر موازنہ کیاجائے تو ہم ان سے بھی پیچھے رہ گئے ہیں۔بیشتر ممالک آج ہم سے آگے ہیں جس کی وجہ بہتر اور معیاری تعلیم پر سنجیدگی سے توجہ دینا ہے۔انہوںنے حکومت پر زور دیا کہ آنے والے بجٹ میں تعلیم کے لیے بجٹ میں اضافہ کیاجائے اور تاجربرادری و اسٹیک ہولڈرز سے بھی مشاورت کی جائے۔
کراچی چیمبر آف کامرس اینڈانڈسٹری(کے سی سی آئی )کے صدر عبداللہ ذکی نے وزیرمملکت کا خیر مقدم کیا اوردنیا کے دیگرممالک کی نسبت پاکستان کے ناقص نظام تعلیم پر گہری تشویش کا اظہارکرتے ہوئے زور دیاکہ تعلیم کے شعبے میںبلا متیاز اصلاحات لائی جائیں تاکہ ملک میں تعلیم کی کم شرح میں بہتری لائی جاسکے۔انہوںنے تعلیم کے شعبے کے لیے 2فیصدفنڈزمختص کرنے پر شدید مایوسی کااظہار کیا اور کہاکہ ملک کو درپیش مسائل کی یہ بھی ایک بڑی وجہ ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

- Advertisment -

Most Popular

گلشن اقبال ، خطرناک ڈکیت پولیس کے ہتھے چڑھ گیا

کراچی، گلشن اقبال پولیس کی بڑی کارروائی، درجنوں وارداتوں میں مطلوب ملزم گرفتار۔ پولیس کے مطابق ملزک صدیق پولیس کو اسٹریٹ، قتل...

ملازمت پیشہ خواتین کے مسائل، اور ان کا حل

تحریر: مریم صدیقی وہ تھکی ہاری شام کے 4 بجے آفس سے نکلی، 4:30 بجے گھر میں...

ولیکا آتشزدگی، واٹر بورڈ نے ایمرجنسی نافذ کردی

کراچی ،واٹر اینڈ سیوریج بورڈ نے سائٹ ٹاؤن ولیکا اسپتال کے قریب فیکٹری میں آتشزدگی کے بعد سخی ھسن ہائیڈرنٹس پر...

کراچی سمیت سندھ میں ٹڈی دل کے حملوں کا خطرہ

کراچی ،سندھ میں پھرفصلوں پرٹڈی دل کےحملےکاخدشہ محمکہ زراعت سندھ نےٹڈی دل کےحملےکانیاالرٹ جاری کردیا ۔ محکمہ زراعت کے حکام کا...