Sunday, November 29, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

پلاسٹک آلودگی ( کرن اسلم)

اگر آپ اپنے ارد گرد نظر دوڑائیں تو آپ کو کسی نہ کسی صورت میں پلاسٹک کی اشیا ضرور ملیں گی۔ مثال کے طور...

بہادرآباد، ڈکیتی کی بڑی واردات،شہری40 لاکھ روپے سے محروم

بہادرآباد میں ڈکیتی کی بڑی واردات، شہری 40 لاکھ روپے سے محروم، ذرائع کے مطابق بہادرآباد شاہ...

میئر کراچی کے پاس اختیارات نہیں تھے، گورنر سندھ

گورنر سندھ عمران اسماعیل نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کا یہ پیغام...

اسٹیل مل کی نجکاری، ملازمین کو معاوضہ کی ادائیگی کا اعلان

حکومت نے اسٹیل مل کی نجکاری کا اعلان کردیا، وفاقی وزیر صنعت و پیداوار حماد اظہر نے...

ایک دن میںچھ افرادکی ٹارگٹ کلنگ لمحہ فکریہ ہے،مفتی نعیم

Mufti Naeemکراچی جامعہ بنوریہ عالمیہ کے رئیس وشیخ الحدیث مفتی محمدنعیم نے شہر قائد میں دہشت گردی کے واقعات اور 6افراد کی ٹارگٹ کلنگ پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ سندھ حکومت امن قائم رکھنے میں ناکام ہوچکی ہے، شہر میں ایک بار پھر مذہبی کارکنان کو نشانہ بنانا فرقہ واریت پھیلانے کی مذموم کوشش ہے ،ملک دشمن عناصر امن برباد کرکے معاشی حب کو نقصان پہنچانا چاہتے ہیں ، ہزاروں کی تعداد میں دہشتگردون کی گرفتاری ، سینکڑوں دہشتگردوں کا مقابلوں میں مارے جانے کے بعددہشتگردی کے واقعات کا نہ رکنا افسوسناک اور لمحہ فکریہ ہے ، ہفتہ کو جامعہ بنوریہ عالمیہ سے جاری بیان میں مفتی محمدنعیم نے کہاکہ نے کہاکہ ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں ایک بار پھر اضافہ افسوسناک ہے ، دہشتگرد شہر میں فرقہ واریت پھیلانے میں مصروف ہیں اور حکومت سندھ کی جانب سے کوئی اقدامات نظر نہیں آتے ہیں گزشتہ دنوں شیعہ کمیونٹی کے پانچ افراد کو مارا گیا آج اہلسنت کے 6کارکنوں کو دن دیہاڑے گولیوں کا نشانہ بنایا گیا ہے، سندھ حکومت شہر کے امن وامان پر توجہ دے دہشت گرد عناصر فرقہ واریت پھیلانے میں مصروف ہوچکے ہیں ، انہوں نے کہاکہ جب دہشتگردی کے واقعات رکتے ہیں تو حکمران بڑے دعوے کرتے ہیں مگر اقدامات پر توجہ نہیں دیتے ، دیرپا امن کیلئے دعوے نہیں اقدامات کی ضرورت ہے، انہوں نے کہاکہ حکمران اگر مخلص ہوتے تو شہر کا امن تباہ کرنے میں کسی کی جرات نہیں ہوتی ہمارے حکمران امن قائم کرنے میں مخلص نظر نہیںآتے ایک طرف ملک میں سیاسی انتشار کی کوششیں کی جاتی ہیں تو دوسری جانب ملک کے سب سے بڑے معاشی حب کو فرقہ واریت کی دلدل میں دھکیلنے کی بھرپور کوششیں کی جارہی ہیں ، انہوں نے کہاکہ شہر میں پائیدار امن کیلئے جامع حکمت عملی ترتیب دیکر اقدامات کرنے ہوں گے اور جائزہ لینے کی ضرورت ہے کہ ہزاروں کی تعداد میں ملزمان کی گرفتاری اور آئے روز پولیس مقابلوں میں دہشت گردوں کے مارے جانے کے باوجودشہر سے ٹارگٹ کلنگ کے واقعات ختم کیوں نہیں ہورہی ۔

Open chat