سال نو کے لیے سوشل میڈیا پیغامات

chand nجمع و ترتیب: عارف رمضان جتوئی
یوں تو ہمارے لیے ہر دن ہی نیا ہوتا ہے مگر کچھ ایسی ترتیب دنیا والوں نے دے ڈالی ہے کہ اب دن کے بعد، مہینہ اور پھر سال بھی نیا ہوگیا۔ ایک مسلم کے لیے اسلامی سال ہی سال نو ہوتا ہے مگر عیسوی تاریخ بھی ہماری زندگی میں اپنا مقام قائم کرچکی ہے۔ ایسا ہی ایک اسلامی سال 1440ھ نئی امنگوں نئے جذبوں اور امیدوں کے ساتھ طلوع ہوچکا ہے۔ نئے سال پر لوگ مبارکیں دیتے ہیں مگر حقیقت میں ہماری زندگی کا ایک سال کم ہوچکا ہوتا ہے۔ نئے سال پر ہم عجیب کشمکش میں مبتلا ہوتے ہیں کہ آیا نئے برس کی خوشی منائیں یا گزرے برس میں ہونی والی غلطیوں پر ماتم کریں۔
ہر طلوع ہوتا سال ہمیں اپنے اہداف دیتا ہے جنہیں ہمیں پورا کرنا ہوتا مگر پھر سال کا اختتام ہورہا ہوتا ہے اور ہم ادھورے کھڑے نئے سال کی پلائنگ کررہے ہوتے ہیں۔ نئے سال کو کیسے بسر کیا جائے اس پر تقریبات، کانفرنسز اور نا جانے کیا کچھ ہوتا مگر وہ سال بھی ختم ہوجاتا ہے اور ہوتا کچھ بھی نہیں۔ آج بھی ہم نئے سال کی دہلیز پار کر چکے ہیں۔ اس سال کو کیسے گزارنا ہے یہ سوچنا بھی ہے اور اس پر عمل بھی کرنا ہے۔ اس بات کا بھی خیال رکھنا ہے کہ سال کے اختتام پر گزشتہ سال کی طرح ہم پھر سے خالی ہاتھ تو نہیں کھڑے ہوں گے۔ اپنے گزر سال کو دیکھیں اور نئے سال کی پلائنگ کریں۔
اگر وقت ہے تو کورسز کریں۔ باہر نہیں جاسکتے تو گھر بیٹھ کر نیٹ سے وڈیو کے ذریعے سیکھیں۔ آن لائن کورسز سے بھی بہت کچھ حاصل کیا جاسکتا ہے۔ عملی زندگی میں اپنے پڑوس میں ایسی مصروفیات ڈھونڈیں جس میں کچھ حاصل ہو۔ قلم کو اپنا ہتھیار بنائیں الغرض بہت کچھ ہے کرنے کا بہت کچھ ہے حاصل ہونے کا مگر غور تو کریں۔ اگر ایسا ہوگیا تو یقینا یہ سال آپ کے لیے بہت خوبصورت سال ثابت ہوگا۔ سال نو پر مبارکیں دینے پر اکتفا کیے بغیر اپنے چاہنے والوں، رشتہ داروں اور دوستوں کو اصلاحی پیغامات دیں۔ انہیں ان کی تربیت کے حوالے سے آئندہ سال میں کرنے کے لیے کچھ لائحہ عمل بتائیں۔ ایسے ہی کچھ پیغامات سوشل میڈیا پر نوجوانوں کی جانب سے دیے گئے ہیں جنہیں ”رائٹرز کلب“ کی جانب سے خصوصی طور پر قارئین کی نذر کیا جارہا ہے۔
دیا خان بلوچ
میرا ارادہ بہت اچھا سا لکھنے کا ہے، بچوں کے ادب میں اپنا نام روشن کرنا ہے ویسے بھی میں دیا ہوں پھر بھی۔۔۔۔ اس سال مجھے ماسٹرز مکمل کرنا ہے جو ادھورے کام ہیں وہ کرنے ہیں اور سب سے بڑی خواہش کہ آنے والے سال میں، عمرہ کی سعادت نصیب ہو، آمین۔ سب کے لیے پیغام ہے کہ وہ اپنے گزشتہ سال میں رہے جانے والوں کو کاموں کو ترجیح بنیادوں پر مکمل کریں۔
عائشہ صدیقہ
اسلامی سال 1439ھ میں بھی خوشیاں، غم، نعمتیں سبھی شامل رہا اور ہمیں اللہ کے شکرگزار ہونا چاہیے. اس کے ساتھ نئے سال کے آغاز میں اپنی گزشتہ غلطیوں سے سیکھ کر آئندہ کے لیے خود کو بہتر بنانے کا پختہ ارادہ کرنا چاہیے. تاکہ آنے والا کل آج سے بہتر ہو، ان شاء الله
زہرا تنویر
نئے سال کے آغاز پر یہ کہنا چاہوں گی کہ نئے سال کے ہر دن کا طلوع ہونے والا سورج ہمارے لیے اچھا ثابت ہو اور کوشش کریں اپنے عمل کو، اپنے اخلاق کو، اپنے کردار کو بہتر کریں کیونکہ اگر ہم خود کو درست سمت پر گامزن کریں گے تو ہمارے آس پاس بھی ہمارے کردار ، عمل اور اخلاق کی خوشبو دوسروں کو متاثر کرے گی۔
ارم فاطمہ
نئے سال کی ابتداء ایک عہد ایک وعدے کے ساتھ کریں کہ جہاں تک ممکن ہوسکا زندگی میں اور، اپنے ملک کے حالات میں بہتری کے لیے دعا کے ساتھ ساتھ عملی طور پر بھی کچھ کام کیا جاسکے ۔خدا سے دعا ہے یہ سال سبھی کے لیے مسرتوں کا پیغام لائے اور ہمارے پیارے پاکستان میں بھی اچھی تبدیلی کا سبب بنے، آمین
صبا نزہت
سال گزشتہ میں دنیا میں ہر طرف جنگ کا سا سماں رہا ۔شام ،فلسطین ، برما کے علاوہ ہمارا اپنا ملک بھی دہشت گردی کا نشانہ بنا رہا ۔معلوم نہیں آنے والا وقت اور کتنی خون ریزی دکھائے ۔اس لیے میں سب لکھاریوں کو یہ پیغام دینا چاہتی ہوں کہ اپنے قلم سے جہاد کریں۔اپنے قلم کواللہ کی امانت سمجھیں اور جو بھی لکھیں اس امید اور مشن کے ساتھ لکھیں کہ آپ کا لکھا ہوا دنیا میں کسی مایوس انسان کونئی امید کا جگنو تھما دے یا کسی بھٹکے ہوئے کو صراط ِمستقیم دکھا دے۔
عثمان الدین
بہترین انسان وہ ہوتا ہے جو اپنی غلطیوں سے سیکھتا ہے،1439ھ کے آختتام پر ہم اس سال خود سے سرزد ہونے والی غلطیوں کو سوچیں اور آئندہ ان سے بچنے کی کوشش کریں تو اگلا سال ان شاء اللہ ہمارے لیے پچھلے سال سے بہتر ثابت ہوگا ، اللہ تعالی ہم سب پر اپنا رحم فرمائے۔ آمین
عالیہ ذوالقرنین
سال بدل جاتے ہیں لیکن ہمارے اعمال نہیں بدلتے اس لیے جیسے اعمال اوپر جاتے ہیں ویسے فیصلے نیچے آتے ہیں ۔محبتیں بانٹیں نفرت کو گھر کی چار دیواری میں ہی ختم کر دیں تاکہ پھر وہ محلوں سے شہروں، اور شہروں سے ملکوں کا رخ کر کے دنیا کو آگ و خون کی بارش میں نہ دھکیلیں ۔ اللہ کرے نیا سال تمام امت مسلمہ کے لیے آسانی اور عافیت والا ثابت ہو، آمین
صائقہ حسن
اللہ تعالیٰ ہیمں مزید موقع دے رہے ہیں ہمیں سمجھنا چاہیے سال گزر رہے ہیں اور زندگی کے دن کم ہو رہے ہیں سو اس لحاظ سے اعمال بہتر بنائیں لوگوں کے ساتھ تعاون کریں، نماز کو اپنا ساتھی بنائیں اور اپنی پاک دھرتی کی کامیابی کے لیے دعا کریں ،سب سے بڑی بات زہنوں کی پختگی کی ہے جس کے لیے مثبت سوچ لازمی ہے ،ہمیشہ خوش رہیں اور دوسروں کو خوش رکھیں ،شکریہ
شمائلہ زاہد
اللّه ہمارے ملک کی حفاظت کریں ،بس میری اتنی سی دعا ہے کے اللہ تعالیٰ ملک میں آئندہ سال قانون اور آئین کی پاسداری کرنے والی حکومت رائج کریں اور کرپشن سے پاک ہوجائے میرا پیارا وطن، آمین
صبح ازل
اس سال بلند وبالا عزم کرنے کی بجاۓصرف اس بات پر فوکس رکھیں چھوٹی سے چھوٹی نیکی کا موقع بھی ہاتھ سے نہیں جا نے دیں گے. جتنا ممکن ہو سکا اپنے لیے اور ملک و قوم کے لیے کام کرنا ہے. اللہ پاک سب کو آسانیاں عطا فرماۓ ،آمین
ایمن احمد
میرا پیغام یہ ہے کہ دیکھیں ہجری سال کا آغاز محرم الحرام سے ہوتا ہے جو کہ ایک حرمت والا مہینہ ہے۔ یہ مقدس مہینہ احترام انسانیت کا پیغام دیتا ہے۔ جیسے کہ حدیث میں آتا ہے پیارے رسول صلی اللہ علیہ وسلم ایک بار کعبہ کا طواف کر رہے تھے آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے کعبہ کو دیکھ فرمایا
“اے کعبہ تو کتنا پاکیزہ ہے، تیری حرمت کتنی پاکیزہ ہے، تو کتنا عظیم ہے، تیری خوشبو کتنی عظیم ہے، لیکن قسم ہے اس ذات کی جس کے ہاتھ میں محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی جان ہے ایک مومن کی حرمت اللہ کے نزدیک تیری حرمت سے بھی بڑھ کر ہے یعنی اس کی جان مال اور آبرو اور یہ کہ لوگ اس کے بارے میں اچھا گمان رکھیں۔”
اللہ تعالیٰ سے دعا ہے کہ وہ اس سال کو ہمارے لیے ہمارے ملک کی لئے اور تمام امت مسلمہ کے لئے رحمت و برکت اور خوشحالی کا سال بنائے (آمین)

شافیہ افضال
نئے ہجری سال 1439 کے آغاز پر سب سے پہلے ہمیں اپنا محاسبہ کرنا چاہیے کہ گزشتہ سال ہم سے کیا  کیا خطائیں سرزد ہوئیں ، اللہ پاک کے کن احکامات  کی ہم نے نافرمانی کی ، اپنے قول اور فعل سے اس کی مخلوق کو کیا ، کیا تکلیف پہنچائی ۔ اس کے بعد خود سے یہ عہد کرنا چاہیے کہ اس سال ہم یہ تمام غلطیاں نہیں دہرائیں گے اور اپنی آخرت سنوارنے کا سامان کریں گے ۔ کیا پتا یہ سال ہماری ذندگی کا آخری سال ثابت ہو اور ہمیں اور مہلت نہ ملے ۔ اس دنیا کو آخرت کی کھیتی کہا گیا ہے ۔ آج جو کچھ بھی ہم بوئیں گے روزِ آخرت وہی کاٹیں گے ۔ لہٰذا ہمارا فرض ہے کہ ہم ہر لمحہ اس بات کو یاد رکھیں اور اپنی تخلیق کے بنیادی مقصد یعنی اللہ پاک کی اطاعت اور شکرگزاری کو پورا کریں ۔فرمان باری تعالیٰ ہے ’’ اے ایمان والو ! اللہ سے ڈرتے رہو اور ہر شخص دیکھ لے کہ اس نے کل کے لیے (آخرت کے لیے ) کیا بھیجا ہے‘‘،  (سورة الحشر)۔
صاعقہ عابد
اسلامی مہینے کے آغاز پر میں یہی کہنا چاہوں گی کہ کبھی بھی خدا تعالیٰ کی رحمت سے مایوس نہ ہوں، نماز کو قائم رکھیں کیونکہ اسلام کی بقا اور سلامتی کے لیے ہی میرے نبیﷺ کے پیارے خاندان نے قربانیاں دی ہیں، الله سے جڑے رہیں اور دعا مانگتے رہیں جو بہترین عمل ہے اور برکات اور رحمتوں کا ذریعہ ہے۔
 دیا خان بلوچ
نیا اسلامی سال سب کو مبارک ہو،یہ سال ہم سب کی مشکلوں اور پریشانیوں سے دوری کا سال ہو۔اس سال ایک مقصد تو ضرور بنائیے کہ جتنا ممکن ہوگا اپنے آس پاس رہنے والوں کا خیال رکھنے کی بھر پور کوشش کریں گے۔ میرا اس سال کا مقصد یہ ہے کہ دل آزاری سے بچنا ہے۔سخت رویے اور ایسے الفاظ سے بچنا ہے جو کسی کی بھی دل آزاری کا باعث بنیں۔یہ سال ہمارے ملک کے لیے بھی خوشحالی کا سال ہو، آمین
عظمیٰ ظفر
اسلامی سال کی آمد پر رائٹرز کلب کے پلیٹ فارم میں شامل ہونا میریے لیے بہت خوش آئند ہے گردش زمانے میں عمر کی پونجی لایعنی کاموں میں گزار دی دعا ہے کہ اس سال علم و عمل میں بہتری لاوں۔اور اللہ سے دعا ہے کہ وطن پاکستان اور عالم اسلام کی حفاظت فرمائے تمام ممبرز میں خلوص اور بھائی چارے کی فضا قائم رکھے تاکہ مثبت کام انجام پائے آمین۔
مریم صدیقی
اسلامی سال نو کا آغاز ہوچکا ہے۔ عالم اسلام کو نیا سال مبارک ہو۔ گزشتہ سال میں کئی ایک ایسے واقعات ہوئے جس نے امت مسلمہ پر یہ واضح کردیا کہ اتحاد ہماری سب سے بڑی طاقت ہے اگر ہم متحد ہوجائیں تو کسی بهی مشکل کا سامنا کرسکتے ہیں۔ہماری پہچان اگر اسلام اور پاکستان ہو تو ہم کسی بهی محاذ پر ڈٹ کر کهڑے ہوسکتے ہیں۔اللہ پاک ہم سب کا حامی و ناصر ہو،  آمین۔
رقیہ فاروقی
سال نو اس دیس کے آنگن میں بہار کی طرح اترے۔ہر سو خوشیوں کی برسات ہو۔ آمین

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Top