Tuesday, November 24, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

خداداد کالونی ،گودام کی بالائی منزل پر آتشزدگی

خداداد کالونی میں گودام کی بالائی منزل میں آگ لگ گئی، فائربریگیڈ کی گاڑیاں روانہ، ریسکیو ذرائع...

نکاسی کی 936 میں سے781شکایات کا ازالہ کردیا،واٹربورڈ

واٹربورڈ نے شہر کے مختلف علاقوں سے موصولہ فراہمی ونکاسی آب کی 700سے زائد شکایات کا ازالہ...

ریسٹورنٹس میں ان ڈورڈائننگ پر پابندی عائد

ریسٹورنٹس میں ان ڈور ڈائننگ پر پابندی عائد، کمشنر کراچی نے ریسٹورنٹس کے حوالے سے تمام ڈپٹی...

سی ویو پر سائیکلنگ کرنے والوں کے خوش خبری

سی ویو پر سائیکلنگ کرنے والوں کے خوش خبری، کنٹونمنٹ بورڈ نے سی ویو پر تین کلو میٹر...

پبلک سروس کمیشن میں بچوں، بھانجوں اوربھتیجیوں کی بھرتیاں

law justice court1کراچی سندھ ہائیکورٹ میں پبلک سروس کمیشن میں بھرتیوں کے معاملے پر عدالت نے چیف سیکریٹری سندھ اور سندھ پبلک سروس کمیشن کے چیئرمین سمیت دیگر افسران کو 14 نومبر تک کے نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا ۔سندھ ہائی کورٹ کے جسٹس محمد علی مظہر پر مشتمل دو رکنی بینچ کی عدالت میں سندھ پبلک سروس کمیشن میں بھرتیوں سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی ۔ عدالت میں اپیل کنندہ کی جانب سے موقف اپنایا گیا کہ سندھ پبلک سروس کمیشن میں افسران نے اپنے بچوں بھانجوں اور بھتیجیوں کو انٹرویو میں پاس کر کے بھرتی کیا ہے ، لہٰذا انٹرویو دوبارہ کئے جائیں اور میرٹ کی بنیاد پر امیدواروں کو بھرتی کیا جائے جبکہ بھرتیوں میں اقلیتوں خواتین اور معذوروں کا کوٹہ شامل نہیں کیا گیا ہے ۔ عدالت نے درخواست گزار کا موقف سننے کے بعد چیف سیکریٹری سندھ اور سندھ پبلک سروس کمیشن کے چیئرمین سمیت دیگر کو 14 نومبر تک کے نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا ۔

Open chat