Wednesday, March 3, 2021
"]
- Advertisment -

مقبول ترین

کوئٹہ نے ملتان کو جیت کےلئے 177 رنز کا ہدف دے دیا

پی ایس ایل میں آج کے دوسرے میچ میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے ملتان سلطانز کو جیت کےلئے 177 رنز کا ہدف دے دیا،...

سینیٹ الیکشن میں سندھ سے سبزواری، واوڈا اور ابڑو کامیاب

 سینیٹ الیکشن، سندھ سے دونوں فیصل کامیاب، سندھ اسمبلی میں ہونے والی پولنگ کے نتائج کے مطابق فیصل واوڈ اور ایم کیو ایم کے...

سینیٹ الیکشن، تحریک انصاف کو سندھ میں جھٹکا لگ گیا

 سندھ میں تحریک انصاف کو جھٹکا، ٹیکنو کریٹ کی نشست پر فاروق ایچ نائیک اورشہادت اعوان کامیاب اب تک سندھ سے پیپلزپارٹی نے 7...

سینیٹ الیکشن، پیپلزپارٹی نے سندھ سے مزید 4 نشستیں جیت لی

 سندھ سے شیری رحمن اور سلیم مانڈوی والا ،تاج حیدر، جام مہتاب بھی کامیاب، سینیٹ الیکشن کے سلسلے میں سندھ اسمبلی سے موصولہ نتائج...

عدالتی حکم کر تجاوزات ختم کررہے ہیں، سعید غنی

 وزیر تعلیم سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کی صوبائی اور وفاقی قیادت کی جانب سے ان زمینوں کے خلاف کارروائی جو کہ قانون کے مطابق کی گئی ہے، اس کو سیاسی رنگ دینے کے تاثر کی نہ صرف مذمت کرتے ہیں بلکہ ان کے اس تاثر سے یہ بات واضح ہوجاتی ہے کہ ایمانداری کا راگ الاپنے والی سلیکٹیڈ اور سیاسی جماعت کے طور پر کرپٹ جماعت ان ناجائز کاموں میں پیش پیش ہے۔ کارروائی سپریم کورٹ کے احکامات پر کی جارہی ہے اور کی جاتی رہے گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہفتہ کے روز اپنے کیمپ آفس میں صوبائی وزیر اینٹی کرپشن جام اکرام اللہ دھاڑیجو کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہاکہ پی ٹی آئی کے نااہل اور اسکول سے باہر والے سندھ اسمبلی کے اپوزیشن لیڈز یہ بتائیں کہ ان زمینوں پر ان کے فارم ہاؤسز کس طرح قانونی تھے۔ سعید غنی نے کہا کہ یہ تاثر دینا کہ یہ کوئی سیاسی انتقامی کارروائی ہے وہ بھی مضحکہ خیز ہے کیونکہ جن جن مقامات پر کارروائی ہوئی ہے وہ زمین حلیم عادل شیخ یا کسی پی ٹی آئی کے رہنماء کے نام پر ہمارے ریکارڈ میں ہے ہی نہیں۔ ایک سوال کے جواب میں سعید غنی نے کہا کہ اینٹی کرپشن نے حلیم عادل کے خلاف 400 ایکڑ سرکاری زمین پر قبضہ کے خلاف انکوائیری کی تو نیب کی جانب سے اینٹی کرپشن سے تمام تحقیقات کی رپورٹ طلب کی گئی ہے، اب ہمیں نہیں معلوم کہ نیب اس کے خلاف کارروائی کرتا ہے یا اس پر پردہ ڈالتا ہے۔ ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ حلیم عادل شیخ بتائیں کہ ملک کا کون سا قانون انہیں 30 سالہ زرعی زمین پر فارم ہاؤس بنانے کی اجازت دیتا ہے۔ ایک اور سوال پر انہوں نے کہا کہ اگر کوئی کام 2002 سے غلط ہوا ہے تو کیا پوری زندگی اس کام کو غلط ہونے دیا جائے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here