Thursday, October 22, 2020
Home Trending کراچی میں شہر مویشیاں کی رونقیں (حفیظ خٹک)

کراچی میں شہر مویشیاں کی رونقیں (حفیظ خٹک)

Qurbani Cow - WAiting for the Buyer in Cow Mandi 2013-752711کراچی سمیت پورے ملک میں ان دنوں نئے پاکستان کی باتیں ہر زبان پر ہیں۔ ملک کی ایک بڑی سیاسی جماعت پاکستان تحریک انصاف گذشتہ کئی دنوں سے اسلام آبا د میںنیا پاکستان بنانے کیلئے دہرنا دیئے بیٹھے ہیں۔ ان کے ساتھ ہی ایک اور جماعت پاکستان عوامی تحریک بھی اس ملک میں انقلاب لانے کیلئے بیٹھے ہیں۔فی الوقت ہر پاکستانی اس انقلاب اور نئے پاکستان کے چکر میں پھنس چکا ہے۔ وقت بڑی تیزی سے گذر رہا ہے ، کچھ دن قبل عید الفطر گذر چکی ہے اور اب عید الضحی قریب آتی جارہی ہے۔ پاکستان سمیت پوری دنیا کے مسلمان عید الضحی کے اس مذہبی تہوار کو نہایت جوش و خروش سے مناتے ہیں۔شہر قائد جو کہ منی پاکستان بھی کہلاتا ہے اسے یہ اعزاز حاصل ہے کہ اس میں ہر رنگ و نسل، مذہب کے لوگ آباد ہیں۔ہر تہوار کو ہی کراچی میں بھرپور طریقے سے منایا جاتاہے۔

عید قربان کے موقع پر تو شہر قائد میں ایک اور شہر آباد ہوجاتا ہے۔ جسے شہر مویشاں بھی کہا جاسکتا ہے۔یہ شہر مویشاں اس ملک کی نہیں بلکہ اس خطے کی سب سے بڑی مویشی منڈی بن جاتی ہے ، مویشی منڈی کیلئے خصوصی انتظامات کئے جاتے ہیں۔ شہر قائد کی انتظامیہ مویشی منڈی کیلئے سات سو (700) ایکڑ اراضی محتص کرتی ہے ۔ کنٹونمنٹ بورڈ ملیر کے کرنل آفتاب سے گفتگو کے دوران یہ معلوم ہوا کہ اس سال بھی ایشیاءکی سب سے بڑی منڈی کیلئے اتنی ہی جگہ رکھی جائیگی ۔منڈی میں ملک بھر سے قربانی کےلئے جانوروں کو لایا جاتا ہے،جانور لانے کے حوالے سے چشتیاں کے ایک بیوپاری چوہدری نذیر کا کہنا ہے کہ کراچی کی مویشی منڈی میں قربانی کے جانور لانے کیلئے پورا سال محنت کی جاتی ہے۔ محتلف علاقوں سے صحتمند ، حوبصورت اور توانا جانور خرید کے ایک فارم میں رکھے جاتے ہیں ، ان کے کھانے پینے کا خصوصی انتظام کیا جاتا ہے۔موسمی تغیرات سے بچانے کیلئے ان جانوروں کا ڈاکٹروں سے معائنہ کرایا جاتاہے۔انہوں نے بتایا کہ منڈی میں ایک خریدار تک پہنچنے کیلئے کئی مراحل سے گذر کر آنا پڑ تا ہے۔عید قربان سے ایک سے ڈیڑہ ماہ قبل کراچی آنے کی تیاریاں شروع کر دی جاتی ہیں۔ جمع شدہ جانوروں کا معائنہ کرنے کے بعد انہیں محتلف ٹرکوں، ٹرالوں میں لادا جاتا ہے، عام دنوں میں جو کرایا لیا جاتا ہے اس سے کہیں زیادہ کرایا ہم سے موصول کی جاتا ہے۔ انہوں نے بتا یا کہ مویشیوں کے ساتھ ان کے کھانے ودیگر ضروریات کی چیزیں بھی ساتھ ہی لانی پڑتی ہیں ، دوران سفر ان جانوروںکے پانی اور کھانے کا خاص خیال رکھا جاتا ہے۔

کراچی کی منڈی میں پہنچنے ہر بڑے جانور گائے، بیل کی مد میں ایک ہزار جبکہ چھوٹے جانور کے 600 روپے وصول کئے جاتے ہیں۔ انکا کہنا تھا کہ داخلی دروازوں کے قریب کی جگہ کے حصول کیلئے بسا اوقات اضافی پیسے دینے پڑتے ہیں۔ عید سے قبل یا پھر عید کے دوسر ے تیسرے روز جب جانور فروخت ہو جاتے ہیں تب ہماری واپسی ہوتی ہے۔ اپنی گفتگو کے آخر میں انہوں نے کہا کہ سارا سال عید کے سیزن کیلئے تیاریاں کی جاتی ہے، اس دوران ذرا سی کوتاہی سے لاکھوں روپے کا نقصان ہوجاتا ہے۔ لہذا ایسے نقصانات سے بچنے کیلئے توجہ اور ذمہ داری سے سارے مراحل طے کئے جاتے ہیں۔ نفع کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ اکثر اوقات ہمیں نفع ہوتا ہے تاہم مارکیٹ میں مندی ہو یا قیمتیں کم ہوں تو نقصان بھی ہوجاتا ہے۔

شہر قائد کی اس مویشی منڈی میں ملک بھر سے جانور لائے جاتے ہیں۔ یہ سلسلہ کچھ دنوں میں شروع ہوجائیگا اور جوں جوں عید الضخی کے دن قریب آتے جائینگے مویشی منڈی کی رونقیں بڑھتی جائینگی۔دو کروڑ سے زائد آبادی کے اس منی پاکستان میں قربانی کے جانوروں کی ضروریات پوری کرنے کیلئے ملیر کنٹونمنٹ بورڈ ، شہری اور صوبائی حکومت سمیت دیگر ادروں کی جانب سے انتظامات شہر مویشاں کیلئے آخری مراحل میں داخل ہوچکے ہیں۔جلد ہی سپر ہائیوے سے متصل موشی منڈی آب و تاب کے ساتھ سب کی توجہ کا مرکز بن جائیگی۔

حفیظ خٹک
Biographical Info

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

- Advertisment -

Most Popular

کیپٹن صفدر کا معاملہ، وزیراعظم کو بریف کرنے گورنر سندھ اسلام آباد پہنچ گئے

گورنر سندھ عمران اسماعیل بڑے مشن پر اسلام آباد پہنچ گئے،گورنر سندھ وزیراعظم عمران خان سے اسلام آباد میں ون آن ون...

کیپٹن صفدرکی گرفتاری تحقیقات کیلئے کمیٹی قائم

سندھ حکومت نے کیپٹن صفدرکی گرفتاری اور پولیس افسران کی چھٹیوں کی درخواست پرتحقیقاتی کمیٹی قائم کردی ، کمیٹی تحقیقات مکمل کرکے...

مسکن چورنگی ھماکہ،مقدمہ گلشن اقبال تھانے میں درج

مسکن چورنگی کے قریب دھماکے سے عمارت کے تباہ ہونے کی ایف آئی آرگلشن اقبال تھانے میں درج کرلی گئی ہے، پولیس...

سندھ حکومت اور پولیس ڈرامہ کررہی ہے، شبلی فراز

کراچی، وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات شبلی فراز نے ایک بار پھر سندھ پولیس کی چھٹیوں کی درخواست کو ڈارمہ قرار دے...