Wednesday, December 2, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

ایم کیو ایم کے سینیٹر عتیق شیخ بھی کورونا میں مبتلا

ایم کیو ایم پاکستان کے سینیٹر عتیق شیخ بھی کورونا وائرس میں مبتلا، سینیٹر عتیق شیخ نے چند روز قابل نجی اسپتال میں طبی...

رینجرز کارروائیوں میں 3 اسٹریٹ کرمنلز گرفتار

سندھ رینجرز کی گلشن اقبال اور شاہ فیصل کالونی میں کارروائیاں، 3 ملزمان گرفتار، ترجمان رینجرز کے مطابق گرفتار ملزمان محمد اختر ،سدھیر احمد...

سندھ میں فنڈجاتا ہے لگتا نظر نہیں آتا، سپریم کورٹ

سپریم کورٹ کا سندھ حکومت پر برہمی کا اظہار،جھیلوں اور شاہراہوں کے اطراف درخت لگانے کا حکم، اس موقع پرچیف جسٹس نے سخت ریمارکس...

جعلی نوٹ چلاتے خاتون گرفتار،نقلی 2 ہزار روپے برآمد

کورنگی کراسنگ کے قریب مارکیٹ میں جعلی نوٹ چلاتے ہوئے خاتون گرفتار، ہزار ہزار کے دو نقلی نوٹ بھی برآمد، پولیس کے مطابق ابراہیم...

سندھ پولیس کے مختلف شعبوں میں غیر قانونی بھرتیوں کاانکشاف

SindhPolice_Logoکراچی، سندھ پولیس میں کرپشن کے نئے راز اب تک نیوز نے فاش کردئیے۔ بغیر کسی اشتہار اور ٹیسٹ کے درجنوں افراد کو اے ایس آئی کی پوسٹ پر بھرتی اور اینٹی انکروچمنٹ سیل کو پرائیویٹ سیل میں منتقل کردیا گیا۔سندھ پولیس میں غیر قانونی بھرتیوں کا انکشاف ہوگیا۔ اینٹی انکروچمنٹ سیل کو سیاسی رہنماوں اور پولیس افسران کے خاندانوں اور بچوں کا پرائیوٹ سیل بنادیا گیا۔ سندھ پولیس کی جانب سے میرٹ کی ایک بار پھر دھجیاں بکھیر دیں گئیں اور بغیر کسی اشتہار اور ٹیسٹ کے ایس آئی کی پوسٹ پر درجنوں افراد کو بھرتی کرلیا گیا۔ بھرےتی ہونے والے افراد میں پیپلز پارٹی کی اہم رہنما کے دیور کے بیٹے میر ثناءاللہ تالپور ، وزیر اعلیٰ کے سیکٹری امتیاز ملاح کے بھتیجے وحید ملاح ،ایس ایس پی نیاز کھوسو کے بیٹے مہراب کھوسو شامل ہیں،جبکہ پیپلز پارٹی کے اہم رہنما خورشید شاہ کے کوٹے پر لطیف شیخ کو سب انسپیکٹر بنادیا گیا۔پیپلز پارٹی کی اہم رہنما کے کوٹے پر عابد زرداری فائز ہو ئے۔ اس کے علاوہ ایس ایس پی حسن دال کا بھتیجا ریاض حسین دال، میر ستار کے وکیل کا بیٹا جہانزیب خان ، پیپلز پارٹی کے کارکن شوکٹ ابڑو اور سی سی پی او میں تعینات کئیے گئے ہیں۔ غیروانوںی بھرتیوں میں پولیس اہلکار کا بیٹا مسرور شیخ سمیت دیگر پولیس افسران اور سیاسی رہنماوں کے فرزند شامل ہیں۔ذرائع کے مطابق ان تمام پولیس اہلکاروں کی تعیناتی بغیر کسی ٹیسٹ کے کی گئیں ہیں، جو بحریہ ٹاون میں فرائض انجام دے رہے ہیں۔ ان تمام پولیس اہلکاروں کے تعیناتی ایس ایس پی عرفان بہادرکے دور میں کی گئیں ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ محکمہ پولیس میں کرپشن کے حوالے سے تحقیقات میں واصف قریشی سمیت دس اہلکار و افسران کو برطرف کیا جاچکا ہے، مگر سیاسی بھرتیوں کے خلاف تاحال کوئی ایکشن نہیں لیا گیا۔
Open chat