Tuesday, December 1, 2020
- Advertisment -

مقبول ترین

ایم کیو ایم کے سینیٹر عتیق شیخ بھی کورونا میں مبتلا

ایم کیو ایم پاکستان کے سینیٹر عتیق شیخ بھی کورونا وائرس میں مبتلا، سینیٹر عتیق شیخ نے چند روز قابل نجی اسپتال میں طبی...

رینجرز کارروائیوں میں 3 اسٹریٹ کرمنلز گرفتار

سندھ رینجرز کی گلشن اقبال اور شاہ فیصل کالونی میں کارروائیاں، 3 ملزمان گرفتار، ترجمان رینجرز کے مطابق گرفتار ملزمان محمد اختر ،سدھیر احمد...

سندھ میں فنڈجاتا ہے لگتا نظر نہیں آتا، سپریم کورٹ

سپریم کورٹ کا سندھ حکومت پر برہمی کا اظہار،جھیلوں اور شاہراہوں کے اطراف درخت لگانے کا حکم، اس موقع پرچیف جسٹس نے سخت ریمارکس...

جعلی نوٹ چلاتے خاتون گرفتار،نقلی 2 ہزار روپے برآمد

کورنگی کراسنگ کے قریب مارکیٹ میں جعلی نوٹ چلاتے ہوئے خاتون گرفتار، ہزار ہزار کے دو نقلی نوٹ بھی برآمد، پولیس کے مطابق ابراہیم...

پاکستان میں ہر سال 4لاکھ 20 ہزار افراد دمے کا شکار ہوتے ہیں

TB dama1کراچی: پاکستان سمیت دنیا بھرمیں تپ دق سے بچاؤ کا دن منایا گیا۔ ٹی بی کا مرض عالمی سطح پر بھی اور خاص طور پر پاکستان اور دیگرترقی پذیر ممالک میں خطرناک صورت اختیار کرچکا ہے۔ پاکستان میں 18 لاکھ سے زائد افراد اس بیماری میں مبتلا ہیں جس میں سالانہ چار لاکھ بیس ہزار نئے مریضوں کا اضافہ ہو رہا ہے۔ٹی بی ایک ایسا مرض ہے جو ایک فرد سے دوسرے میں منتقل ہوجاتا ہے۔ عالمی ادارہ صحت کے مطابق اس وقت دنیا کی ایک تہائی آبادی اس مرض سے متاثر ہوچکی ہے۔ اس میں سے 90 فیصد مریض ترقی پذیر ملکوں میں ہیں۔ ہرسال 90 لاکھ کے لگ بھگ افراد اس مرض کا شکار اور 20 لاکھ موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔ ٹی بی کی علامات میں دو ہفتے سے زائد کھانسی رہنا، بھوک کا نہ لگنا، بخار ہونا، وزن میں مسلسل کمی اور دیگرعوامل شامل ہوتے ہیں۔صوبہ سندھ میں ٹی بی سے متاثرہ مریضوں کی تعداد ساڑھے چار لاکھ سے زائد ہے۔ جبکہ ہر دو سیکنڈ میں ایک پاکستانی ٹی بی جیسے مہلک مرض کا شکار بن رہا ہے۔

Open chat