Monday, October 19, 2020
Home خاص خبریں صحت، تعلیم، فلاحی ادارے آرٹس کونسل آف پاکستان میں ساتویں اردو عالمی کانفرنس کا آغاز

آرٹس کونسل آف پاکستان میں ساتویں اردو عالمی کانفرنس کا آغاز

Arts council karachiکراچی کے آرٹس کونسل آف پاکستان میں ساتویں اردو عالمی کانفرنس کا آغاز ہوگیا، افتتاحی سیشن میں اردو کے ناموار ادیبوں شعراء اور افسانہ نگاروں نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔آرٹس کونسل کے سیکٹریری احمد شاہ نے اردو کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اردو کی ترقی کے لئے سات سالوں سے کانفرنس منعقد کی جارہی ہے۔ ادب کے اس میلے میں مختلف سیشنز منعقد کئے جائیں گے جس میں زباں و بیاں پر بحث کی جائے گی۔کانفرنس کے پہلے روز مشتاق احمد یوسفی کی کتاب ، شام شعر یاراں ، کی تقریب رونمائی ہوئی مصنف نے یہ کتاب بیس برس بعد تحریر کی جس میں کانفرنس کے شرکاء نے خوب دلچسپی دکھائی۔ اس سال ادب وزبان سے متعلق مختلف سرگرمیوں کے ساتھ ساتھ، مشرقی موسیقی، کلاسیکی رقص اور عالمی مشاعرہ بھی شامل کیا گیا ہے۔

 ملک کے معروف دانشور ،محقق اور افسانہ نگار انتظار حسین نے کراچی آرٹس کونسل میں منعقد ہ ساتویں عالمی اردو کانفرنس کے افتتاحی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ قیامتیں تو اب دنیا ئے اسلام میں ٹوٹی ہوئی ہیں۔مسلمانوں کو اس کی عادت ہونی چاہیے اور ہمیں ثقافت کو پروان چڑھانے کا سفر جاری رکھنا چاہیے۔ ادب کے میدا ن میں آنے والوں میں ایک ہزار راتوں کے اندھیروں کو برداشت کرنے کا حوصلہ ہونا چاہیے

اس موقع پر مجلس صدارت میں عبداﷲ حسین ،مسعود اشعر،ضیامحی الدین،ڈاکٹر افضال حسین ،افتخار عارف، پروفیسر سحر انصاری ،ڈاکٹر پیر زادہ قاسم ،مستنصر حسین تارڑ،عطاالحق قاسمی،خلیل طوقار، رضا علی عابدی اور صدر آرٹس کونسل پروفیسر اعجاز احمد فاروقی بھی موجود تھے۔ صدر مجلس نے مزید کہا کہ کراچی کا سات سال پہلے بھی یہی نقشہ تھا جو آج ہے ۔جب پہلی اردو کانفرنس کا انعقاد ہوا تو کوئی سوچ بھی نہیں سکتا تھا کہ یہ کانفرنس تواتر کے ساتھ منعقد ہوتی رہے گی ۔ کراچی بلاشبہ دمشق سے آگے بڑھ گیا ہے ۔کراچی والوں نے کمال کردکھایا ہے ۔لاہور والوں نے یہاں کی دیکھا دیکھی کانفرنس شروع کی اور اب کراچی ،لاہور کے بعد اسلام آباد میں بھی اردو کانفرنس منعقد ہورہی ہے ۔انہوں نے کہا ایک طرف قیامت مچی ہوئی ہے تو دوسر ی طرف ادب کی کانفرنسیں جاری ہیں ۔جو لوگ موت سے بھاگتے ہیں وہ دراصل موت کی طرف بھاگتے ہیں۔افتتاحی اجلاس میں کلیدی خطبہ پیش کرتے ہوئے بھارت سے آئے ہو ئے مندوب ڈاکٹر قاضی افضال حسین نے کہا کہ زبان ترسیل کا ذریعہ ہوتی ہے ۔ترسیلی طور پر قائم ہونے والی اردو زبان آج خلقی طور پر پائی جاتی ہے ۔ہماری زبان میں ہمیشہ ارتقاء ہوتا رہا ہے ۔انہو ں نے کہا کہ اس کے باوجو د میں سوچتا ہوں کہ جب مشتاق یوسفی ہم میں نہیں ہونگے تو ہم کس طر ح زندہ ہونگے ۔جس معاشر ے میں ہم رہ رہے ہیں اس میں انسان بدل رہا ہے

۔سابق شیخ الجامعہ کراچی ڈاکٹر پیر زادہ قاسم نے کہا کہ ہمارا آج ہمیشہ بدل جانے والی چیز ہے ۔ اس بات کو ذہن میں رکھتے ہوئے ہمیں بدلتے ہوئے منظر میں اپنا عکس دیکھنا ہوگا ۔اردو زبان ادب اور ثقافت کا سب سے بڑا پرچار بن چکی ہے ۔کسی بھی روایت کو قائم رکھنا بڑی بات ہوتی ہے ۔مگر اسے مستقل رکھنا کہیں زیادہ مشکل ہوتا ہے ۔اردو ادب کی یہ سب سے بڑی کانفرنس ہے ۔زبان ،ادب ،ثقافت کو موجودہ صورتحال میں دیکھنا چاہیے ، معاشرہ بدلتا رہتا ہے ۔معاشر ے کی نفسیات میں بڑی تبدیلیا ں آچکی ہیں ہمارے معاشر ے نے اپنی ترجیحات بدل لی ہیں ۔زبان ،ادب ،ثقافت اب ہماری ترجیحات میں شامل نہیں رہے ۔ہم غیر محسوس طور پر عالم گیر کلچر کی طرف مائل ہوتے جارہے ہیں ۔تاریخ ہمیں بتاتی ہے کہ اقلیت میں رہنے والی ثقافت کبھی پروان نہیں چڑھتی ۔ہمیں اپنی زبان ،ثقافت اور ادب کی مثبت باتوں پر گہر ی نظر رکھنی چاہیے ۔سیکریٹری آرٹس کونسل محمد احمد شاہ نے خطبہ استقبالیہ پیش کرتے ہوئے کہا کہ ہرزبان ایک تہذیب کو جنم دیتی ہے ۔اردو نے بھی ایک تہذیب کو جنم دیا ہے ۔ میں اور میرے ساتھیوں سمیت مشتاق احمد یوسفی کی وجہ سے یہاں جلسہ صدارت میں تشریف فرما اور بہت سے اکابرین اس اردو کانفرنس سے جڑتے رہے ہیں ۔یہ عظیم اجتماع نفرتوں کو زائل کرنے کی حقیر سی کوشش ہے ۔یہ شہرابھی بانجھ نہیں ہوا ،مردہ نہیں ہوا۔ ہماری ثقافت میں بڑی جان ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

- Advertisment -

Most Popular

کیپٹن صفدر کی ضانت منظور

مزار قائد بے حرمی کیس میں اغو کا مقدمہ درج ہونے کے بعد اب سٹی کورٹ ایک لاکھ روپے کت...

مصباح سے کوئی اختلاف نہیں، ان کا ورک لوڈ کم کیا ہے:مانی

جیو نیوز سے خصوصی گفتگو میں چئیرمین پی سی بی احسان مانی نے پی ایس ایل اور پی سی بی تنازع کے...

چھاتی کا سرطان: کہیں آپ لاعلم تو نہیں؟

اینکرز کے کوٹ اور دوپٹوں پر لگی ’’پنک ربن‘‘ کا مقصد ناظرین کو ہر لمحہ ’’ ماہ اکتوبر: بریسٹ کینسر سے آگاہی...

کیپٹن (ر) صفدر گرفتار، سندھ حکومت نے لاتعلقی ظاہر کردی

اکستان مسلم لیگ ن کے رہنما کیپٹن (ر) صفدر کو کراچی کے ہوٹل سے گرفتار کرلیا گیا۔ مزار قائد کا تقدس پامال...